الیکشن میں سرمایہ داروں اور جاگیرداروں سے مقابلہ ہے ،سید محمد آفریدی

الیکشن میں سرمایہ داروں اور جاگیرداروں سے مقابلہ ہے ،سید محمد آفریدی

باڑہ( نمائندہ پاکستان) باڑہ الیکشن 2018 حلقہ این اے 44سے آزاد امیدوار سید محمد آفریدی نے عام آدمی کا نعرہ لگا کر اپنے انتخابی مہم کا آغاز کر دیا ہے ۔گزشتہ روز انہوں نے اپنی رہائش گاہ پر قبیلہ سپاہ ،شیخ آباد ،سپین قبر اور سپاہ کے مختلف ذیلی تپوں کے سیکڑوں لوگوں کا ایک مصالحتی اجتماع منعقد کیا جس میں مقامی قبیلے کے لوگوں نے سید محمد آفریدی کو انتخابات میں بھر پور طریقے سے سپورٹ کرنے کا عہد کر لیا اور موصوف کو ہرممکن طریقے سے انتخابات میں کامیابی سے ہمکنار کرنے کا وعدہ کر لیا ۔کارنر جلسے سے خطاب کرتے ہوئے امیدوار سید محمد آفریدی نے کہا کہ میں عام آدمی ہوں جبکہ موجودہ الیکشن میں سرمایہ دار ،کارخانے دار اور کرب پتی لوگ ہمارے مقابل ہیں لیکن اپنے حلقے کی غریب عوام کی درد لیکر ان سرمایہ داروں اور برسوں سے حلقے کے عوام پر مسلط ضمیر خریدوں کو شکست سے دو چار کریں گے ۔انہوں نے کہا کہ اگر انہیں کامیابی ملی تو سب سے پہلی ترجیح اپنے حلقے کے عوام کو پینے کی صاف پانی کا مسلہ ہر ممکن طریقے سے حل کروں گا ۔ انہوں نے کہا کہ سپاہ کے دیہاتی علاقے گنداؤ ،سپین قبر اور نہر غاڑہ جہاں پینے کی پانی کا شدید بحران ہے اور علاقائی لوگ پینے کی پانی کے ایک ایک قطرے کے لئے ترس رہے ہیں ، اگر اللہ تعالیٰ نے کامیابی دی تو یہاں کے عوام کے آبنوشی کا یہ دیرینہ مطالبہ حل کرکے انہیں صحت اور تعلیم کے سہولیات بھی فراہم کریں گے ۔انہوں نے قبیلے کے لوگوں کو یقین دہانی کراتے ہوئے کہا کہ سابقہ پارلیمنٹرین کا کردار سب کے سامنے ہیں کہ یہاں سپاہ کے علاقے میں کوئی ڈگری کالج ابھی تک نہیں بنا اس کے باوجود کہ ان ہی قبیلے سے بعض پارلیمنٹیرین نے ووٹ لیکر صرف اپنی مفادات کو سامنے رکھا اور حلقے کے عوام کی بنیادی مسائل سے منہ موڑ لیا لیکن اس بار ایسا ہرگز نہیں ہو گا کیونکہ علاقائی عوام میں شعور ہے اور انہیں کھرے اور کھوٹے کا خوب علم ہیں ۔انہوں نے کہا کہ انتخابات میں کامیابی کے بعد ڈوگرہ ہسپتال کو پشاور کے بڑے ہسپتالوں کے برابر لانے کے لئے کوئی کثر نہیں چھوڑا جائے گا ۔کارنر جلسے سے آزاد امید وار کے بھائی اوربڑے مونچھ رکھنے میں عالمی شہرت حاصل کرنے والے میر محمد آفریدی ،امیر شاہ آفریدی ،اعجاز آفریدی ،ریٹائرڈ صوبیدار اختر افضل آفریدی اور قبیلہ سپاہ کے دیگر مقامی مشران نے بھی خطاب کیا ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر