طوفان بادوباراں‘ ملتان سمیت جنوبی کے درجنوں دیہات میں بجلی بحال نہ ہو سکی

طوفان بادوباراں‘ ملتان سمیت جنوبی کے درجنوں دیہات میں بجلی بحال نہ ہو سکی

  

ملتان‘ کروڑ لعل عیسن‘ وہوا‘ لیاقت پور (نیوز رپورٹر‘ نمائندگان پاکستان) طوفان بادوباراں‘ ملتان سمیت جنوبی پنجاب کے درجنوں دیہاتوں میں بجلی بحال نہ ہوسکی۔ ملتان سے نیوز رپورٹر کے مطابق چیف ایگزیکٹو آفیسر میپکو انجینئرطاہر محمود نے کہا ہے کہ طوفان بادوباراں میں متاثرہ فیڈرز سے بجلی کی سپلائی کم سے کم وقت میں بحال کی جائے اور ہنگامی حالات سے نمٹنے کے لئے عملہ کو الرٹ رکھاجائے(بقیہ نمبر58صفحہ12پر)

۔ بجلی بحالی کے کام شروع کرنے سے قبل ٹی اینڈ پی اور پی پی ای کا استعمال یقینی بنایاجائے۔ گرڈاسٹیشن سے پی ٹی ڈبلیو حاصل کئے بغیر بحالی کے کاموں کا آغاز نہ کیاجائے۔ لائن سٹاف بجلی بحال کرنے سے پہلے اپنی حفاظت یقینی بنائیں۔یہ بات انہوں نے خانیوال ڈویژن کے اچانک دورے کے موقع پر افسران اور ملازمین سے بات چیت کرتے ہوئے کہی۔ایس ڈی او ز اور ایکسین اہداف کے حصول کے لئے دن رات محنت کریں اور فیلڈ میں خود چیکنگ کریں۔ رننگ اور ڈیڈڈیفالٹرز سے بلوں اور واجبات کی وصولی کی جائے۔ ناکامی پر متعلقہ افسران کے خلاف محکمانہ کاروائی کی جائے گی۔ چیف انجینئر پلاننگ میپکو محمد عمر لودھی بھی ان کے ہمراہ تھے۔انہوں نے کہا کہ لائن لاسز میں کمی کی جائے اور مقررہ اہداف حاصل کرنے کے لئے جدوجہد کی جائے۔ بجلی چوروں کے خلاف ٹیمیں بناکر کاروائی کی جائے اور ان سے کوئی رعایت نہ برتی جائے۔ ایس ڈی اوز مستقل نادہندگان کے کنکشنز کی رات کے اوقات میں چیکنگ لازمی کریں اور اگر کسی مستقل نادہندہ کا کنکشن چلتاہواپایاگیاتو متعلقہ ایس ڈی او جوابدہ ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ فیڈرز پر ٹرپنگ کی شرح میں کمی کرنے کے لئے پٹرولنگ کی جائے اور خطرناک پوائنٹس پر بجلی تنصیبات درست کرکے نصب کی جائیں۔ میپکو ممتاز آباد ڈویژن میں حالیہ بارشوں اور طوفانی آندھیوں سے بجلی کے آلات کا بھاری نقصان ہوا ہے جن کو درست کرنے میں گزشتہ ایک ہفتہ سے مرمت کا کام جاری ہے جس کو مکمل ابھی تک نہیں کیا جارہا ہے بالخصوص زرعی ٹیوب ویل فیڈز میں بجلی کی سپلائی بحال نہ ہونے کی وجہ سے کاشتہ فصلوں کا کافی نقصان ہورہا ہے جس میں کماد اور دھان کی کاشتہ فصلوں کو شدید گرمی اور حبس میں روزانہ سیراب کرنا پڑتا ہے دیہی علاقوں چیک 5فیض، آراپلی، ٹبہ پیر تنوں قصبہ ثانی، قصبہ ثالث، کپر مراد والے فیض بخش والہ کے درجنوں دیہات میں بجلی کی سپلائی بحال نہیں ہوسکی ہے کئی بجلی کے کھمبے زمین بوس ہوگے ہیں جن میں ابھی تک بجلی کا کرنٹ تک بند نہیں کیا گیاہے جس سے بڑے حادثات ہونے کا اندیشہ پیدا ہوگیاہے کئی ٹرانسفارمز بھی کمھبوں سمیت گرے پڑے ہیں جن کو سیدھا تک نہیں کیا جارہا ہے جس پر مذکورہ علاقوں کے کسان کاشتکار زمیندار سراپااحتجاج ہیں انہوں نے مطالبہ کیا ہے کہ فوری طور پر بجلی کے کھمبے درست کئے جائیں بجلی کی سپلائی بحال کی جائے ورنہ وہ چیف ایگزیکٹو میپکو کیدفتر کے باہر مظاہر ہ کریں گئے اور وزیراعظم پوٹل پر شکایات کا اندارج کروائیں گئے۔ کروڑ لعل عیسن سے نمائندہ پاکستان کے مطابق گزشتہ شام طوفانی بارش سے یونین کونسل واڑہ سیہڑاں کے موضع دین پور میں دیواریں گرگئیں نکاسی آب نہ ہونے سے لوگوں کو مشکلات طوفانی بارش سے بجلی کے کھمبے گرگئے جسکی وجہ سیبجلی کانظام درہم برہم ہوگیا لوگ گہروں میں پانی کی بوندبوندکوترس گئے مچھروں کی بہتات سے ملیریابخار پھیلنے کاخدشہ جبکہ قدیم امام بارگاہ میں غازی عباس کاعلم بھی گرگیا اوریونین کونسل سام?یہ میں بہی دیواریں گرگئیں درخت ٹوٹ گئے پولٹری فارم کی چھتیں اڑگئیں اوربجلی کانظام بہی معطل ہوگیا اہل علاقہ نے محکمہ واپڈاکے اعلی حکام سے بجلی بحالی کامطالبہ کیاہے۔ وہوا سے نمائندہ پاکستان کے مطابق وہوا اور نواحی قصبات میں قیامت خیز آندھی، بارش اور شدید ژالہ باری نے تباہی مچادی،درجنوں تناور درخت، بجلی کے پول، دیواریں، چھتیں،سائن بورڈ زمین بوس،درجنوں مویشی لاپتہ، سینکڑوں پرندے ہلاک،مواصلاتی نظام درہم برہم، بجلی کا پندہ گھنٹوں سے طویل بریک ڈاؤن، نظام زندگی مفلوج ہوکر رہ گیا،کوہ سلیمان پر بارش برسنے سے برساتی ندی نالوں میں طغیانی، درجنوں نواحی قصبات کا وہوا سے زمینی رابطہ منقطع، قصبات جزیروں کی شکل اختیار کرگئے،فصلات کو نقصان پہنچا، تفصیل کے مطابق گذشتہ شب وہوا اور نواحی قصبات جن میں مٹھوان، لتڑا، درکانی، صابو خیل، ظہور آباد، بستی درولی، شاہ جھوک، جھوک بودو، باطلہ، روڈہ ٹبہ، ڈگر والی، کوتانی، جلووالی، کوہر، مندھریں سمیت درجنوں دیہات شامل ہیں میں تیز آندھی چلنے کے بعد شدید بارش اور طوفان کے ساتھ ساتھ ژالہ باری ہوئی جس سے ہر طرف جل تھل ہوگیا گلی محلوں میں ہر طرف پانی جمع ہوجانے کے باعث راستے مسدود ہوکر رہ گئے 70 کلومیٹر فی گھنٹہ سے زائد کی رفتار سے آنے والی تیز آندھی نے قیامت برپا کردی گرڈاسٹیشن نوراحمد والی کے 15 سے زائد پول زمین بوس ہوگئے جس سے بجلی کا طویل بریک ڈاؤن ہوگیا اورسٹی فیڈر وہوا کی بجلی 15 گھنٹوں سے زائد وقت کے لیے بند رہی اور شہریوں کو شدید پریشانی کا سامنا کرنا پڑا تیز آندھی کے باعث کئی تناور درخت جڑوں سے اکھڑ گئے جس سے سینکڑوں پرندے ہلاک ہوگئے جبکہ درجنوں پختہ و کچی دیواریں، چھتیں منہدم ہوگئیں تاہم کوئی جانی نقصان نہیں ہوا دکانوں کے سائن بورڈز اور سولر پلیٹیں چھتوں سے اڑ کر کئی فٹ دور جاگریں مواصلاتی نظام بھی مکمل طور پر جام ہوکر رہ گیا طوفان بادو باراں کے باعث چراہ گاہوں میں موجود درجنوں مویشی بھی ہلاک جبکہ کئی لاپتہ ہوگئے شدید بارش کے باعث فصلات اور مویشیوں کے لیے کاشتہ چارہ جات کو بھی شدید نقصان پہنچا فصلات کے تباہ ہوجانے سے زمینداروں اور کسانوں کو ناقابل تلافی نقصان پہنچا ہے جبکہ چارہ تباہ ہوجانے سے آئندہ سیزن میں مویشیوں کے کھانے کے لیے چارہ کی قلت پیدا ہونے کا اندیشہ پیدا ہوگیا کوہ سلیمان پر بارش برسنے سے برساتی ندی نالوں میں شدید طغیانی آگئی جس کے باعث وہوا کے نواح میں درجنوں پہاڑی اور میدانی علاقوں کا وہوا سے زمینی رابطہ مکمل طور پر منقطع ہوکر رہ گیا۔ لیاقت پور سے نامہ نگار کے مطابق یپکو سرکل لیاقت پور میں بجلی کی غیرعلانیہ لوڈشیڈنگ سے شہریوں کی زندگیاں اجیرن، گرمی کی شدت نے گھروں میں موجود خواتین اور بچوں کو اذیت میں مبتلا کردیا۔ لائن لاسز پورے کرنے کیلئے غیرقانونی طورپر بجلی بند کی جارہی ہے۔ صارفین کا الزام، گذشتہ کئی روز سے میپکو لیاقت پور سمیت اللہ آباد، فیروزہ، خانبیلہ اور ترنڈہ محمد پناہ سب ڈویژنوں میں بجلی کی غیراعلانیہ بندش کا سلسلہ جاری ہے۔ میپکو حکام بغیر پیشگی اطلاع کے دن اور رات کو بار بار کئی کئی گھنٹوں کیلئے بجلی بند کررہے ہیں۔ ذرائع کے مطابق گرڈاسٹیشن سے بجلی کی ترسیل جاری ہوتی ہے مگر میپکو اہلکار گرڈ اسٹیشن کے باہر سے بجلی منقطع کردیتے ہیں۔ آج بھی کچی منڈی فیڈر کو دن بارہ بجے سے شام گئے تک بند رکھا گیا جس کی وجہ سے شدید گرمی نے شہریوں خ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -