پراپرٹی ڈیلروں کا مال روڈ پر دھرنا،رائیل اسٹیٹ پر عائد ٹیکسوں کی واپسی کا مطالبہ

پراپرٹی ڈیلروں کا مال روڈ پر دھرنا،رائیل اسٹیٹ پر عائد ٹیکسوں کی واپسی کا ...

  

لاہور(ڈویلپمنٹ سیل،پنے نمائندہ سے)پراپرٹی ڈیلرز سڑکوں پر آ گئے،ڈی ایچ اے لاہور کے 6فیزز سمیت لاہور کے18مختلف علاقوں کی ایسوسی ایشنز کی احتجاجی ریلیاں اپنے اپنے علاقوں سے جلوس لے کر پنجاب اسمبلی کے باہر پہنچے، چیئرنگ کراس پر سینکڑوں پراپرٹی ڈیلرز کا احتجاجی دھرنا،رئیل اسٹیٹ پر لگائے گئے ٹیکسز کی واپسی کا مطالبہ،ایف بی آر اور ڈی سی ریٹس میں اضافہ واپس لینے تک دھرنا جاری رکھنے کا اعلان،لاہور کے مختلف علاقوں کی ایسوسی ایشن کے جلوس کی مشترکہ قیادت فیڈریشن آف رئیلٹرز لاہور کے صدر طاہر مسعود چودھری نے کی جبکہ سب سے بڑا جلوس ڈی ایچ اے کے مختلف فیزز سے جلوس لالک جان چوک پہنچے،وہاں سے بڑی ریلی ڈی ایچ اے اسٹیٹ ایجنٹس ایسوسی ایشن لاہور لاہور کے صدر ابو بکر بھٹی،چیئر مین ملک آصف جہانگیر،سیکرٹری میاں شاہد محمود،سابق صدر الخدمت گروپ کے چیئرمین میاں طلعت احمد،سیکرٹری حاجی زاہد حسین،وائس چیئرمین ڈی ایچ اے عرفان میو،میاں نواز،مون ملک،ذو الفقار حسن،علی اکبر بھٹی،میاں احمد یاسر،رفاقت کیانی،سید سعود بخاری،چودھری عبد الحمید،خالد ظفر نظامی،خواجہ عاصم،افتخار حسین،شفیق چغتائی،نواز غنی،حسن اختر عباسی،منور حسین،بابا شکور،عامر عظمت شیخ،عقیل ملک،شیر داد خان،سابق سیکرٹری ڈاکٹر خالد محمود چودھری،آصف شیخ،رانا افتخار،ارشد نجمی،طارق بھٹی،شیراز احمد،محمد نوح،ملک نصیر،ندیم ملک،زین ملک،طارق منیر،میجر محیی ٰالدین،راشد خا،،میجر انوار ڈار،حافظ عرفان یوسف،عدیل چودھری،اعجاز امین چودھری اپنے اپنے فیزز سے جلوس لے کر وائی بلاک پہنچے وہاں سے ابو بکر بھٹی،میاں طلعت احمد،میاں شاہد محمودملک،آصف جہانگیر کی قیادت میں درجنوں گاڑیوں،سینکڑوں موٹر سائیکلوں پر مشتمل جلوس لبرٹی چوک پہنچا،وہاں سے مین بلیوارڈ نہر سے مال روڈ ہوتا ہوا اسمبلی ہال پہنچا،فیڈریشن آف رئیلٹرز لاہور کے صدر طاہر مسعود چودھری سے منسلک جوہر ٹاؤن سے میاں ماجد،جوبلی ٹاؤن سے نعمت اللہ چٹھہ،فیصل ٹاؤن سے چودھری طارق گجر،بحریہ ٹاؤن سے میاں ناصر جاوید،سبزا زار سے مہر شہباز،اقبال ٹاؤن سے اشرف بھٹی،کالج روڈ سے طاہر گجر،رائیونڈ روڈ سے حاجی اشفاق گجر،الکبیر ٹاؤن سے میاں مبشر،،ڈی ایچ اے رہبر سے طاہر مسعود،گرین ٹاؤن سے اقبال غورسی،،EMRسے اختر حسین،کینال روڈ سے خرم شہزاد،فیروز پور روڈ سے چودھری اویس،جوہر ٹاؤن سے چودھری شفقت بندیشہ،چودھری اکبر،چودھری احسان بڑے جلوس لے کر اسمبلی ہال کے سامنے پہنچے اور جلسہ کیا اور پھر دھرنا دیا،اسمبلی ہال کے باہر پراپرٹی ڈیلرز کے احتجاجی دھرنے سے خطاب کرتے ہوئے ڈی ایچ اے کے صدر ابو بکر بھٹی نے کہا کہ پنجاب سب سے زیادہ ریونیو دیتا ہے،غلط پالیسیوں کی وجہ سے پراپرٹی کا کاروبار ٹھپ ہو کر رہ گیا ہے،،سیکرٹری میاں شاہد محمود نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وزیر اعظم کا 50لاکھ گھروں کا خواب ہاؤسنگ سیکٹر کو ریلیف دے کر ہی حاصل کیا جا سکتا تھا،سب سے زیادہ ریونیو دینے والا شعبہ کو بدنام کیا جا رہا ہے کہ ہم ٹیکس چور ہیں حالانکہ ہم سب سے زیادہ ٹیکس دینے والے ہیں،اے بی اسٹیٹ کے چوہدری شہباز،ٹاپ لینڈ کے ظہیر الحق چیمہ اور ماڈل ٹاؤن ڈیلرز کے صدر عتیق جوئیہ نے کہا کہ حکومت نے 16ارب سے ریونیو بڑھا کر40ارب کرنے کا فیصلہ کیا ہے وہ زمینی حقائق کے منافی اور کاروبار دشمنی کی مثال ہے۔ اشٹام سیلرز ایسوسی ایشن کے صدر شیخ کامران نے حکومت سے ٹیکسوں کے اضافے پر فوری نظرثانی کا مطالبہ کر دیا۔۔ رئیل اسٹیٹ سے وابستہ ڈیلرز، اشٹام سیلرز، ڈویلپر، ہاؤسنگ سکیم مالکان سمیت تمام شعبہ ہائے زندگی کی نمائندگی کرنے والے افرادنے مال روڈ پر مظاہرہ اور حکومت کے خلاف نعرہ بازی کی اور ایف بی آر کے ریٹسں پر نظر ثانی کرنے کا مطالبہ کیا۔این زیڈ اسٹیٹ کے ملک نصیر نے کہا کہ حکومت انڈا کھانے کی بجائے مرغی حلال کرنے پر عمل پیرا ہے جس سے رئیل اسٹیٹ کا کاروبار چاروں شانے چت ہو جائے گا اور ایسی تباہی مچے گی جس کا ازالہ ممکن نہ ہوگا،صدر لاہور طاہر مسعود چودھری نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ظالمانہ ٹیکس نا منظور ہمارا احتجاج پُر امن ہے،ٹیکسز واپس نہ لیے گئے تو پُر امن نہیں رہیں گے،میاں طلعت احمد نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ایف بی آر ٹیبلز ریٹس مارکیٹ پرائس سے بھی کئی گنا بڑھانا غیر منصفانہ اور کاروبار کو تباہ کرنے کی سازش ہے،ڈی سی ریٹس اورFBRریٹس میں اضافہ واپس لیا جائے،چودھری شفقت بندیشہ  نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ہمارے دفاتر بند ہو رہے ہیں،کاروبار ختم ہو گیا ہے،ہمارے مطالبات تسلیم نہ کئے گئے تو دما دم مست قلندر ہو گا،پنجاب فیڈریشن آف رئیلٹرز کے سیکرٹڑی اطلاعات احسان اللہ چودھری نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ میرے بچوں کا رزق چھینا جا رہا ہے جو قابل قبول نہیں ہے،ملک بھر میں FBRنے خوف کی فضا پیدا کر دی ہے لوگ خوف سے سرمایہ باہر منتقل کر رہے ہیں بے یقینی کی کیفیت ہے وزیر اعظم نوٹس لیں اور بحران ختم کرانے میں کردار ادا کریں،جوہر ٹاؤن کے ملک عثمان،سبزا زار کے مہر شہباز،تبسم بخاری،عرفان،میاں احمد یاسر،مون ملک،،آصف شیخ،ذو الفقار حسن،سید سعود بخاری،عدیل چودھری نے بھی دھرنے سے خطاب کیا۔ 

ڈیلرز احتجاج

لاہور(ڈویلپمنٹ سیل)پراپرٹی ڈیلرز کے ملک گیر احتجاج پر وزیر اعظم نے نوٹس لے لیا،مشیر خزانہ حفیظ شیخ نے پراپرٹی ڈیلرز کے نمائندوں کو اسلام آباد بلوا کر معاملات حل کرنے کییقین دہانی کرادی،،مشیر خزانہ حفیظ شیخ نےDHAکے صدر ابو بکر بھٹی اور فیڈریشن آف رئیلٹرزلاہور کے صدر طاہر مسعود چودھری اور اسلام آباد،پشاور اور کراچی کے نمائندوں کو ہفتے کو اسلام آباد ملاقات کے لیے بلوا لیا ہے،روزنامہ پاکستان کو معلوم ہوا ہے کہ پراپرٹی ڈیلرز کے ملک گیر احتجاج اور دھرنے کو ختم کرانے میں مشیر اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے اہم کردار ادا کیا ہے،ہفتہ کو اسلام آباد میں مشیر خزانہ سے ملاقات کا اہتمام بھی وہی کروا رہی ہیں،ملاقات میں FBRکے  نمائندوں کی شرکت بھی متوقع ہے،مشیر خزانہ کی طرف سے ہفتہ کو مذاکرات کے لیے بلائے جانے کے بعد اسمبلی ہال کے باہر سے دھرنا ختم کر دیا گیا ہے،صدر ڈی ایچ اے ابو بکر بھٹی نے روزنامہ پاکستان کو بتایا کہ ہم حکومت اورFBRکو احتجاجی یاد داشت پہلے ہی پیش کر چکے ہیں اور انہیں پراپرٹی کے بحران سے آگاہ بھی کر دیا ہے اگر ہفتہ کو ہمارے مطالبات تسلیم کر لیے جاتے ہیں تو ہم احتجاجی تحریک کو روک دیں گے،ہم عارضی طور پر دھرنا ختم کر رہے ہیں ہمیں مطالبات تسلیم کرنے کا یقین دلایا گیا ہے اگر مطالبات نہ مانے گئے تو اگلے لائحہ عمل کا اعلان باہمی مشاور ت سے کریں گے۔  

مزید :

صفحہ آخر -