دینی مدارس کوتنگ کرنے کاسلسلہ بندکیاجائے ،مدارس کی حفاظت کرتے رہیں گے:مولانافضل الرحمن

  دینی مدارس کوتنگ کرنے کاسلسلہ بندکیاجائے ،مدارس کی حفاظت کرتے رہیں ...
  دینی مدارس کوتنگ کرنے کاسلسلہ بندکیاجائے ،مدارس کی حفاظت کرتے رہیں گے:مولانافضل الرحمن

  

اسلام آباد( صباح نیوز)جمعیت علماء اسلام کے سربراہ مولانافضل الرحمن نے کہاہے کہ دینی مدارس کوتنگ کرنے کاسلسلہ بندکیاجائے،مدارس کی حفاظت کرتے رہیں گے،بلاجواز چھاپے مدارس مخالف مہم کا حصہ ہیں ۔اسلام آبادکے قدیم دینی ادارے دارالعلوم اسلام آباد کے دورے کے موقع پرمولانافضل الرحمن نے  دینی مدارس پر مسلسل چھاپوں اور مدارس مخالف مہم پر شدید غم و غصے کا اظہار کرتے ہوئے ان واقعات کی سخت الفاظ میں مذمت کی اورگفتگوکرتے ہوئے کہاکہ دینی مدارس اسلام کی چھاؤنیاں ہیں، مدارس پربلاجواز چھاپے مار کر مدارس کو مشکوک بنایا جا رہا ہے،بلاجواز چھاپوں کا سلسلہ فی الفور بند کیا جائے،جمعیت علماء اسلام دینی مدارس کی حفاظت کے لیے اپناکردارپہلے کی طرح اداکرتی رہے گی،موجودہ حکومت نے پہلے دن سے مدارس کوتنگ کرنے کاسلسلہ شروع کررکھا ہے،اس وقت سب سے اہم مسئلہ پاکستان کے اسلامی تشخص اور نظریاتی حیثیت کا تحفظ اور اس کو غیروں کے تسلط سے نکالنا ہے،ملک کولبرل اور سیکولر بنانے کی کوششوں اور سازشوں کے سامنے بند باندھنا پوری پاکستانی قوم کا فریضہ ہے،اسلام سلامتی اور امن کا مذہب ہے ،مدارس دینیہ امن وسلامتی او رمحبت پھیلانے کی یونیورسٹیاں ہیں،دینی مدارس سے مسلمانوں کا تشخص اور اسلامی شعور زندہ ہے،اس شعور،خودداری ،جذبہ حریت، اور اپنے تہذیب اور مذہب کا دفاع ہی مسلمانوں کا اصل سرمایہ ہے، جوان مدارس کے تعلیم کا مرہون منت ہے،تعلیم کا بھرم صرف دینی مدارس سے قائم ہے،حکمرانوں سے ستربہتر سال میں اپنے تعلیمی نظام اور نصاب کی اصلاح نہ ہوسکی ،ہمارے تعلیمی نظام سے اسلامی اثرات اور تعلیمات کو چن چن کر نکالاجارہاہے مگر پاکستان میں یہ کوششیں ہرگز کامیاب نہیں ہوسکیں گی ۔ 

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -