بلاول بھٹو نے کراچی کے شہریوں کیلئے پیپلز بس سروس کا افتتاح کر دیا

بلاول بھٹو نے کراچی کے شہریوں کیلئے پیپلز بس سروس کا افتتاح کر دیا

  


      کراچی (اسٹاف رپورٹر)کراچی کے شہریوں کے لیے مختلف روٹس پر پیپلز انٹرا ڈسٹرکٹ بس سروس منصوبے کا آغاز کردیا گیاہے،منصوبے کا افتتاح پیرکوپاکستان پیپلز پارٹی  کے چیئرمین اور وزیر خارجہ بلاول بھٹو زرداری نے کیا۔وزیر اعلی سندھ سید مراد علی شاہ، وزیر اطلاعات وٹرانسپورٹ شرجیل انعام میمن، وزیرمحنت سعیدغنی، ایڈمنسٹریٹرکراچی نے  ان کی کابینہ کے ارکان نے افتتاحی تقریب میں شرکت کی۔اس موقع پر بلاول بھٹو نے بسوں میں سوار ہو کر ان کا معائنہ بھی کیا۔بس کی تفصیلات سے متعلق گفتگو کرتے ہوئے صوبائی وزیر اطلاعات و ٹرانسپورٹ شرجیل میمن نے کہاکہ اس امپورٹڈ ایئر کنڈیشن بس میں کیمرے نصب ہیں، اس میں وائی فائی کی سہولت بھی موجود ہے، ایک بس میں بیک وقت 90 افراد سفر کرسکتے ہیں جبکہ اس میں خصوصی لوگوں کے لیے جگہ مختص کی گئی ہے۔صوبائی وزیر ٹرانسپورٹ نے بتایاکہ مزید بسیں بھی لائیں گے اور بسوں کی تعداد ہزاروں تک جائیں گی، یہ عوام کی اپنی بس سروس ہے جو ان کی سہولت اور آسانی کے لیے شروع کی گئی ہے۔انٹرا ڈسٹرکٹ بس منصوبے کے تحت چین سے درآمد کی جانے والی تقریبا 240 ایئر کنڈیشنڈ بسیں کراچی کے 7 روٹس پر چلائی جائیں گی۔پہلے مرحلے میں پیپلز بس سروس کو ملیر ماڈل کالونی سے ٹاور تک چلایا جائے گا۔ اس 29.5 کلومیٹر کے روٹ پر 38 اسٹیشن بنائے گئے ہیں۔دیگر6 روٹس میں نارتھ کراچی سے انڈس ہسپتال(کورنگی)کا فاصلہ 32.9کلومیٹر، ناگن چورنگی سے سنگر چورنگی (کورنگی انڈسٹریل ایریا)33 کلومیٹر، نارتھ کراچی تا ڈاکیارڈ 30.4 کلومیٹر، سرجانی ٹاؤن سے پی اے ایف مسرور 28.2 کلومیٹر، گلشن بہار(اورنگی ٹاؤن)سے سنگر چورنگی 29 کلومیٹر اور موسمیات سے بلدیہ ٹاؤن 28.9 کلومیٹر شامل ہیں۔سندھ حکومت نے آئندہ مالی سال 2022-23 کے بجٹ میں اس منصوبے کے تحت کراچی میں چلائی جانے والی مزید بسوں کی خریداری کے لیے 4 ارب روپے مختص کیے ہیں۔واضح رہے کہ کراچی میں بلدیاتی انتخابات کے دوسرے مرحلے سے قبل اس عوامی ضرورت اور اہمیت کے اہم منصوبے کا افتتاح کیا گیا ہے جب کہ بہت سے لوگوں کا خیال ہے کہ یہ منصوبہ پی پی پی کی زیرقیادت سندھ حکومت عوامی اہمیت کے منصوبوں کو انتخابی مہم کے طور پر شروع کر کے شہر کے لوگوں کو اپنی جانب راغب کرنے کی کوشش کر رہی ہے۔

مزید :

صفحہ اول -