لاہور ہائی کورٹ نے قتل کے مجرم کی سزائے موت کوعمر قید میں تبدیل کر دیا

لاہور ہائی کورٹ نے قتل کے مجرم کی سزائے موت کوعمر قید میں تبدیل کر دیا

لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہور ہائی کورٹ کے مسٹر جسٹس سردار طارق مسعود اورجسٹس عبد السمیع خان پر مشتمل ڈویژن بنچ نے قتل کے مجرم منڈی بہاﺅالدین کے رہائشی ڈاکٹر عمران نامی شخص کی سزائے موت کوعمر قید میں تبدیل کر دیا ۔ جبکہ اس الزام میں شریک ملزمان کی بریت کے خلاف اپیلوں کو خارج کر دیا ۔ ڈاکٹر عمران پر جائیداد کے تنازعہ پر قتل کرنے کا الزام تھا، مجرم عمران کی جانب سے محمد عارف گوندل ایڈووکیٹ پیش ہوئے انہوں نے عدالت کو بتایا کہ دوران ٹرائل مقتول کو قتل کرنے کی وجہ عناد ثابت نہیں ہو سکی ملزم کو ایک فائر لگا اور مقتول ملزم کے سامنے پڑا تھا اگر ملزم کی مقتول کو مارنے کی نیت ہوتی تو وہ اسے فائر کر کے مار دیتا۔ فاضل عدالت نے فریقین کے وکلاءکے دلائل سننے کے بعد ملزم ڈاکٹر عمران کی ماتحت عدالت سے ملنے والی سزائے موت کی سزا کو عمر قید میں تبدیل کر دیا جبکہ اس حوالے سے شریک ملزمان کی بریت کے خلاف اپیلیں خارج کر دی ۔

مزید : علاقائی