سانحہ ماڈل ٹاؤن کے ذمہ دار دنیا و آخرت میں ذلیل ہوں گے،فیض الرحمن درانی

سانحہ ماڈل ٹاؤن کے ذمہ دار دنیا و آخرت میں ذلیل ہوں گے،فیض الرحمن درانی

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

 لاہور (نمائندہ خصوصی ) تحریک منہاج القرآن کے مرکزی امیر صاحبزادہ فیض الرحمان درانی نے کہا ہے کہ اسلام نے محکومین کے درمیان عدل کے قیام کو ضروری قرار دیا ہے حاکم وقت کا دینی فریضہ ہے کہ وہ لوگوں کو عدل فراہم کریں ۔عدل کی اولین بنیاد یہ ہے کہ کسی بھی فریق پر ظلم نہ ہو ۔سانحہ ماڈل ٹاؤن میں ریاستی دہشت کر کے معصوم شہریوں کو زخمی و شہید کرنے والے ظالم حکمران دنیا میں بھی ذلیل و خوار ہوں گے اور آخرت میں بھی ۔وہ جامع المنہاج ماڈل ٹاؤن میں جمعۃ المبارک کے بڑے اجتماع سے خطاب کر رہے تھے ۔صاحبزادہ مسکین فیض الرحمن درانی نے کہا کہ چیئرمین سنی اتحاد کونسل کے خلاف مقدمہ بازیوں کی شدید مذمت کرتے ہیں پنجاب حکومت علمائے حق کے خلاف کارروائیاں کر کے دہشت گردی کو تقویت دے رہی ہے تاریخ گواہ ہے کہ صاحبزادہ حامد رضا اور انکے بزرگوں کا دہشت گردی کے خلاف بڑا واضح موقف ہے دہشت گردی کی حمایت کرنے والے حکمران ایسی مذموم کارروائیاں کر کے ملکی سا لمیت کے خلاف سازشیں کر رہے ہیں پاکستان کی سیاست ایک سیاسی اکھاڑے کا روپ دھار چکی ہے ،قومی مجرم مقتدر بن بیٹھے ہیں ۔انہوں نے اپنے خطاب میں کہا کہ پنجاب کے حکمران ہوش کے ناخن لیتے ہوئے محب وطن اور اسلام پسند شخصیات کے خلاف مقدمات فوری واپس لیں اگر صاحبزادہ حامد رضا کے خلاف مقدمات واپس نہ لئے گئے تو لوگ سڑکوں پر آنے پر مجبور ہو جائیں گے ۔