پاکستان کیلئے مزید کچھ کر سکتا تھا مگرحکمرانوں نے روک دیا،ہالینڈ میں کام کے دوران ہونیوالی بچت سے گزربسر کررہاہوں : ڈاکٹرعبدالقدیر خان

پاکستان کیلئے مزید کچھ کر سکتا تھا مگرحکمرانوں نے روک دیا،ہالینڈ میں کام کے ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

اسلام آباد(این این آئی)محسن پاکستان ڈاکٹرعبدالقدیر خان نے کہاہے کہ میں ملک کیلئے بہت کچھ کر سکتا تھا لیکن حکمرانوں نے روک دیا جب کہ ایٹمی قوت کا سہرا ذوالفقار بھٹو کے سر جاتا ہے،پرویز مشرف نے غیر ملکی ایماء پر مجھے ہٹایا، مجھ پر غلط الزامات لگائے گئے، میں نے حکمرانوں سے کبھی کوئی زمین یا پیسہ نہیں لیا، آج بھی اپنی گزر اوقات ہالینڈ میں کام کے دوران کی گئی بچت سے کرتا ہوں اوراس حوالے سے میرے پاس تمام رسیدیں موجود ہیں۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر عبدالقدیر خان نے کہا کہ ذوالفقارعلی بھٹو بہت بڑے محب وطن تھے ،ایٹمی قوت کا سہرا ذوالفقار علی بھٹو کے سر جاتا ہے، جنہوں نے مجھ جیسے نوجوان پر بھروسہ کیا۔ ہم نے ایٹم بم پر 1974 میں اور میزائل ٹیکنالوجی پر کام بینظیر بھٹو کے دور میں شروع کیا اور کم وسائل کے باوجود ملک کو ایٹمی اور میزائل قوت بنایا۔ انہوں نے کہا کہ جنرل ضیاء الحق اور پھر سابق صدر غلام اسحاق خان کو تحریری طور پر بتایا کہ ہم ہفتے کے نوٹس پر ایٹم بم کاتجربہ کر سکتے ہیں اور جب بھارت نے ایٹمی دھماکے کیے تو حکمرانوں پر واضح کر دیا کہ برابر کا جواب دینا ضروری ہے۔ڈاکٹر عبدالقدیر خان نے کہا کہ میں ملک کیلئے بہت کچھ کر سکتا تھا لیکن حکمرانوں نے روک دیا، حکومت کو سستی آٹو موبائل انڈسٹری لگانے کی پیشکش کی لیکن اسے مسترد کر دیا گیا۔

مزید :

علاقائی -