پانامہ کیس فیصلہ میں تاخیر کی وجہ ججوں کے اختلافات ہیں ،جمشید دستی

پانامہ کیس فیصلہ میں تاخیر کی وجہ ججوں کے اختلافات ہیں ،جمشید دستی

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

ملتان(اے این این)پاکستان عوامی راج پارٹی کے سربراہ جمشید دستی نے دعویٰ کیا ہے کہ پانامہ کیس کافیصلہ ججوں کے آپس میں اختلافات کے باعث تاخیر کا شکار ہے ،سپریم کورٹ جلد فیصلہ سنا کر قوم میں موجود بے چینی ختم کرے ، یہ تاثر دیا جارہاہے کہ آصف زرداری اور شرجیل میمن کی وطن واپسی فوج کیساتھ ڈیل کا نتیجہ ہے ،آئی ایس پی آر وضاحتی بیان جاری کرے۔ملتان پریس کلب میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے جمشیددستی نے الزام عائدکیاکہ ماضی میں پاکستان کی عدلیہ کبھی آمریت تو کبھی ’’جمہوری ڈاکوؤں‘‘ کے ہاتھوں بکتی رہی ہے جس کی وجہ سے آج پاکستان میں کرپشن کا راج ہے ۔ ایک سوال کے جواب میں انہو ں نے کہا کہ سننے میں آرہا ہے کہ پانامہ کے فیصلے کے حوالے سے ججز میں اختلاف ہے جس کی وجہ سے فیصلے میں تاخیر ہو رہی ہے۔ جمشید دستی نے کہاکہ ایبٹ آباد کمیشن کی رپورٹ قوم کے سامنے پیش کر کے اس کے زمہ داروں کو کیفر کردار تک پہنچایا جائے۔ ایک سوال کے جواب میں سربراہ پاکستان عوامی راج پارٹی نے کہاکہ یہ تاثر دیا جا رہا ہے آصف زرداری اور شرجیل میمن کی وطن واپسی فوج کے ساتھ پس پردہ ڈیل کانتیجہہے۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ آئی ایس پی آر اس حوالے سے وضاحتی بیان جاری کرے اور اگر کوئی ایسی ڈیل ہے تو اسے قوم کے سامنے لایا جائے۔ اس موقع جمشید دستی نے کہا کہ اگر انہیں ملتان میں جلسہ کرنے کی اجازت نہ ملی تو وہ ڈپٹی کمشنر ملتان ار وزیر وزیراعظم پاکستان کے دفتر کے باہر دھرنا دیں گے۔