ٹریفک ہنگامے نے کاروباری سرگرمیوں کو متاثر کر دیا،صدر لاہور چیمبر

ٹریفک ہنگامے نے کاروباری سرگرمیوں کو متاثر کر دیا،صدر لاہور چیمبر

لاہور(کامرس رپورٹر) لارڈمیئر لاہور کرنل (ر)مبشر جاوید نے لاہور چیمبر کے صدر ملک طاہر جاوید، سینئر نائب صدر خواجہ خاور رشید، نائب صدر ذیشان خلیل اور ایگزیکٹو کمیٹی اراکین سے ملاقات میں کہا ہے کہ کاروباری برادری انجن آف گروتھ اور پاکستان کو بڑی معاشی قوت بنانے کی بھرپور صلاحیت رکھتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ آج کا دور معاشی جنگ کا ہے اور تمام ممالک یہ جنگ جیتنے کی بھرپور کوشش کررہے ہیں، 70کی دہائی میں معاشی مشکلات کا شکار ممالک آج ترقی یافتہ بن چکے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ تاجروں کے مسائل حل کرنا حکومت کی ترجیح ہے، ٹریفک، ناجائز تجاوزات کے خاتمے سمیت دیگر مسائل حل کرنے کے لیے ٹھوس اقدامات اٹھائے جارہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ سڑکوں کی تعمیر کے لیے بجٹ مختص کردیا گیا ہے، تین چار ماہ میں کام شروع ہوجائے گا۔ لاہور چیمبر کے صدر ملک طاہر جاوید نے کہا کہ آج کے دور میں شہروں کو آپس میں مسابقت کا سامنا ہے، مردم شماری 2017ء کے مطابق پاکستان کی چھیاسٹھ فیصد آبادی شہروں میں رہتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ مردم شماری 1998ء کے مطابق لاہوردوسرا بڑا شہر تھا اور 2017 کی مردم شماری میں بھی یہ پوزیشن برقرار ہے۔ انہوں نے کہا کہ لاہور کی معیشت ٹریلین روپے سے تجاوز کرچکی ہے، 2010-11میں لاہور کی معیشت کا حجم 945.6ارب روپے تھا جو 2014-15ء میں 1227ارب روپے سے تجاوز کرگیا۔ انہوں نے کہا کہ لاہور نے مستقبل میں معاشی حوالے سے بہت اہم کردار ادا کرنا ہے لہذا کاروباری برادری کے مسائل حل کرکے انہیں معاشی ترقی میں حصہ ڈالنے کا موقع دیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ لاہور کی تمام اہم مارکیٹوں کے گرد و نواح میں پارکنگ پلازے ہونا ضروری ہے کیونکہ ٹریفک کے ہنگامے نے کاروباری سرگرمیوں کو بْری طرح متاثر کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ شہر کے ڈرینیج سسٹم کو بہتری کی ضرورت ہے کیونکہ بارشوں کا پانی مارکیٹوں و گوداموں میں داخل ہوکر تباہی مچاتاہے۔ ملک طاہر جاوید نے کہا کہ مال روڈ پر احتجاجی مظاہروں پر پابندی کے قانون پر انتہائی سختی سے عمل کرایا جائے۔

انہوں نے شہر میں ترقیاتی کام جلد مکمل کرنے کی ضرورت پر بھی زور دیا۔ اجلاس میں ملک طاہر جاوید، خواجہ خاور رشید اور ذیشان خلیل کے ہمراہ سہیل لاشاری، طاہر منظور چودھری، شاہد نذیر، شہباز اسلم، ڈاکٹر شاہد رصا، میاں محمد نواز، نعیم حنیف ، عدنان خالد بٹ و دیگر بھی موجود تھے۔

مزید : کامرس