شبقدر ،بجلی کی ناروا لوڈشیڈنگ سے عوام کی زندگی اجیرن

شبقدر ،بجلی کی ناروا لوڈشیڈنگ سے عوام کی زندگی اجیرن

  

شبقدر(نمائندہ خصوصی )شبقدر میں طویل لوڈشڈنگ اور مقامی اہلکاروں کی بجلی بندش نے عوام کی زندگی اجیرن کر دی ۔ لوڈشیڈنگ شیڈول کے ساتھ واپڈا اہلکار مین لائن پر کام کے بہانہ کئی گھنٹوں کیلئے بجلی بند کر دیتے ہیں ۔ جبکہ شیڈول میں بجلی اوقات گرزنے کے بعد صارفین کو ریلیف سے بھی محروم کر دیا گیا ہیں ۔ اگر بجلی لوڈشڈنگ میں فوری کمی اور واپڈا اہلکار اپنے کرتوت سے باز نہ آئے تو علاقہ عوام واپڈا کے خلاف سڑکوں پر نکلنے پر مجبور ہونگے ۔ ان خیالات کا اظہار مختلف یونین کونسل سے منتخب عوامی نمائندوں اور عوامی حلقو نے اپنے ایک مشترکہ بیان میں کہیں ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ ایک طرف واپڈا نے شبقدر کے تمام بجلی فیڈر پر اٹھارہ سے بیس گھنٹے لوڈشیڈنگ کا ظالمانہ شیڈول جاری کر رکھا ہے تو دوسرے جانب مقامی واپڈا اہلکار مین لائن پر اسی اوقات میں کام کا بہانہ بناکر بجلی بند کرنے کا پرمٹ لیکر بند کر دیتے ہیں ۔ جس سے نہ صرف گھنٹوں بجلی بند رہتی ہیں بلکہ شیڈول میں آنے والی بجلی کا وقت بھی گزر جا تا ہے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ لوڈشڈنگ کے ساتھ محکمہ واپڈا نے صارفین سے ریلیف کا حق بھی چھین لیا ہے ۔ جس سے مقامی واپڈا اہلکاروں کے پر مٹ کے دوران بجلی دورانیہ گزر جانے کے بعد بجلی ریلیف ختم کیا گیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ شبقدر میں صارفین بجلی بجلی بل ادائیگی کر رہے ہیں لیکن محکمہ واپڈا کے اہلکار صارفین سے تعاون کرنے کو تیار نہیں ۔ اگر واپڈا اہلکاروں کا رویہ اور لوڈشیڈنگ کا ظالمانہ رویہ برقرار رہا تو علاقہ عوام واپڈا کے خلاف جلد سڑکوں پر نکل کر واپڈا دفاتر کے سامنے دھرنا دیں گے جس میں کسی بھی نقصان کی تمام تر ذمہ داری مقامی واپڈا حکام پر ہو گی ۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -