عالمی برادری تنازع کشمیر حل کرانے میں مددکرئے،شمیم شال

عالمی برادری تنازع کشمیر حل کرانے میں مددکرئے،شمیم شال

  

اسلام آباد(پ ر)جنیوا میں اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کونسل میں انٹرنیشنل مسلم ویمن یونین نے کشمیر کے جنگ زدہ علاقے میں خواتین کی حالت زار اور خواتین کا کردار کے زیر عنوان ایک سیمینار منعقد کیا۔ میڈم شمیم شال نے سیمینار میں عالمی برادری سے مطالبہ کیا کہ وہ تنازعہ کشمیر کو پرامن طریقے سے حل کرانے میں مدد دیں۔پاکستان اور بھارت کے درمیان اس تنازعے کی وجہ سے جنوبی ایشیا کے امن کو بھی خطرہ ہے ۔اقوام متحدہ کی کئی قراردادوں میں یہ ایک متنازع مسئلہ ہے۔ بھارت مقبوضہ کشمیر میں کشمیریوں کے حق خود ارادیت کو دبانے کی کوشش کررہاہے۔ شمیم شال نے اپنے خطاب میں مقبوضہ کشمیر کی تازہ ترین صورتحال پر روشنی ڈالتے ہوئے سامعین سے اپیل کی کہ وہ اس کے خلاف اپنی آواز بلند کریں۔ انہوں نے منصوبہ بند طریقے سے اور بڑے پیمانے پر جاری جنسی تشدد پر تشویش کا اظہار کیا ۔ انہوں نے کہا کہ بھارتی فوج کی طرف سے خواتین کی بے حرمتی اور جبری گمشدیاں روز کا معمول چکی ہیں۔ 7ہزار لوگوں کو دوران قید قتل کیا گیا ہے۔ 22ہزار عورتیں بیوہ ہوئی ہیں۔ ایک لاکھ پانچ ہزار بچے یتیم جبکہ 11ہزار خواتین کی عصمت دری کی گئی ہے۔ 6ہزار قبریں اور ہزاروں لوگوں کو جعلی مقابلوں میں شہید کیا گیا ہے۔ ،کوٹلی یونیورسٹی کی شگفتہ اشر ف نے کنٹرول لائن کی صورتحال کو اجاگر کیا۔ کنٹرول لائن اور ورکنگ بانڈری پر بھارتی خلاف ورزی کے حوالے سے بھی اقوام متحدہ کو آگاہ کیا گیا۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -