اوباش کی معصوم طالبہ سے زیادتی، خون میں لت پت چھوڑ کر فرار

اوباش کی معصوم طالبہ سے زیادتی، خون میں لت پت چھوڑ کر فرار
 اوباش کی معصوم طالبہ سے زیادتی، خون میں لت پت چھوڑ کر فرار

  


منڈی فیض آباد (ویب ڈیسک) نواحی گاﺅں موضع ملی والہ میں ایک اوباش نے پہلی جماعت کی پانچ سالہ طالبہ کو ورغلا کر باہر کھیتوں میں لے جاکر زبردستی زیادتی کرنے کے بعد اسے خون میں لت پت چھوڑ کر فرار ہوگیا۔

یوٹیوب چینل سبسکرائب کرنے کیلئے یہاں کلک کریں

روزنامہ خبریں کے مطابق پولیس رپورٹ میں طالبہ کے والد بابر علی نے بیان کیا ہے کہ میری بچی گھر سے باہر کھیلنے کے لئے گئی جب کافی دیر گھر واپس نہ آئی تو معززین دیہہ ریاض احمد، محمد بوٹا کو لے کر بچی کی تلاش کے لئے گاﺅں سے باہر ٹیوب ویل کے قریب پہنچے تو قریبی کھیتوں سے بچی کے چیخنے کی آوازیں آرہی تھیں۔

مَیں معززین کے ہمراہ جب کھیت میں پہنچا تو ملزم میری بیٹی کے ساتھ زیادتی کررہا تھا ہمیں دیکھ کر بچی کو برہنہ حالت میں چھوڑ کر فرار ہوگیا۔ پولیس نے ملزم  کو گرفتارکرلیا.

ملزم نے دوران تفتیش بتایا کہ (ع) میری خالہ کی بیٹی ہے۔ مضروبہ کو دیہی مرکز صحت ریحانوالہ میں داخل کرادیا گیا، مزید تفتیش جاری ہے۔

مزید : جرم و انصاف