70سالوں سے قوم کو یرغمال اور اداروں کو ہائی جیک کرنے والوں کا یوم حساب آنے والا ہے: سراج الحق

 70سالوں سے قوم کو یرغمال اور اداروں کو ہائی جیک کرنے والوں کا یوم حساب آنے ...
 70سالوں سے قوم کو یرغمال اور اداروں کو ہائی جیک کرنے والوں کا یوم حساب آنے والا ہے: سراج الحق

  

راولپنڈی(ڈیلی پاکستان آن لائن)امیر جماعت اسلامی پاکستان سراج الحق نے کہاکہ تین مارشل لاز اور چندخاندانوں نے قوم کے 73 سال ضائع کردیے ، بے ضمیر اور وطن فروش طبقہ نے اپنےمفادات کی خاطر قائد کے پاکستان کو زبان ، نسل اور مسالک کی بنیاد پر تقسیم کیا ہواہے ،تحریک انصاف(پی ٹی آئی)  ن لیگ اور پیپلز پارٹی ایک تکون اور اپنی اپنی باریوں کے منتظر ہیں،عوام کو نوید سناتاہوں اندھیری رات ختم ہونے والی ہے،اب ملک میں خاندانوں کی سیاست نہیں چلے گی ۔ حکومت نے رمضان سے قبل چینی، گھی مزید مہنگے کردیے ،جو بجلی استعمال کرتاہے اس پر مہینہ کے آخر میں آسمانی بجلی گرتی ہے،بھارت سے پیار کی پینگیں بڑھانے کی کوششیں کرنےوالوں کو واضح کردینا چاہتے ہیں کہ جب تک مقبوضہ کشمیر میں ایک بھارتی فوجی بھی موجود ہے ، نئی دہلی سے دوستی نہیں ہوسکتی، ظلم و جبر،کرپشن کےنظام کوجماعت اسلامی تبدیل کرسکتی ہے۔

لیاقت باغ میں عوام کے ایک بڑے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئےسراج الحق نے کہاکہ بیسویں صدی کا عظیم واقعہ پاکستان کا حصول تھا مگرہائی جیکرز نے کچھ عرصہ بعد ہی ایوانوں اور اداروں پر قبضہ کرلیا ، یہ وہی لوگ تھے جنہوں نے انگریزوں کی تابعداری کی اور آج بھی انہی کی نسلیں پارٹیاں بدل بدل کر ملک پر حکمرانی کر رہی ہیں،اب طلوع سحر ہونے کو ہے،میڈیا کا شکریہ کہ اس نے تمام کے چہرے بے نقاب کردیے،عوام اپنے حقوق پرڈاکہ ڈالنے والوں کو خوب پہچان چکے ہیں ۔

انہوں نے پی ٹی آئی حکومت کو ملکی تاریخ کی نااہل حکومت قرار دیتے ہوئے کہاکہ موجودہ حکومت مہنگائی کو کنٹرول کرنے میں مکمل ناکام ہو گئی ہے،گزشتہ ڈھائی سال میں ادویات کی قیمتوں میں تین سو فیصد ، اشیائے خوردو نوش ، بجلی ، گیس اور پٹرول کی قیمتوں میں 30سے 100 فیصد اضافہ ہوا ،وزیراعظم کو ڈاکٹر مہاتیر محمد نے کارخانے بنانےکا مشورہ دیا تھا مگر وہ لنگر خانے بنانے میں مصروف ہو گئے،اگر ان کا بس چلے تو وزیراعظم ہاؤس کو مسافر خانہ اور ایوان صدر کو

لنگر خانہ بنادے تاکہ عیاشیاں کرنے والے حکمرانوں کو نصیحت ملے،پارلیمنٹ کے ایک سیشن پر کروڑوں خرچ ہو جاتے ہیں مگر وہاں عوام کو سننے کو گالیاں ملتی ہیں ۔ انہوں نے وزیراعظم کی جانب سے بنگلہ دیش کوپاکستان سے الگ ہونے کے پچاس سال مکمل ہونے پر مبارکباد کا پیغام دینے پرشدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ ڈھاکہ میں مودی اور حسینہ واجد جشن منارہےاور ہمارے وزیراعظم انہیں مبارکبادیں دے رہے ہیں،حکمرانوں کی کشمیر کو بھول کر بھارت سے دوستی کرنے کی خواہش کو کبھی پورا نہیں ہونے دیں گے ۔

سراج الحق نے جماعت اسلامی راولپنڈی کو جلسے کے شاندار انتظامات کرنے اور عوام کو بڑی تعداد میں شرکت کرنے پرمبارکباد دیتے ہوئے کہاکہ لیاقت باغ سے ہی ملک کی بڑی سیاسی تحریکوں کا آغاز ہوا ۔ اسی تاریخی مقام پر ہم عہد کرتے ہیں کہ ملک کو اسلام کا گہوارہ بنائیں گے اور دولت ، تعصب ، ظلم ، تکبر کے سومناتوں کو پاش پاش کریں گے ۔

   

مزید :

قومی -