آسکر ایوارڈز کی 94ویں تقریب ،ول سمتھ نے 30 سال بعد پہلا آسکر جیت لیا

 آسکر ایوارڈز کی 94ویں تقریب ،ول سمتھ نے 30 سال بعد پہلا آسکر جیت لیا
 آسکر ایوارڈز کی 94ویں تقریب ،ول سمتھ نے 30 سال بعد پہلا آسکر جیت لیا
سورس: pixabay.com(creative commons license)

  

لاس اینجلس(ڈیلی پاکستان آن لائن )فلمی دنیا کے سب سے بڑے شوآسکر ایوارڈ کی رنگا رنگ تقریب گزشتہ روز لاس اینجلس میں متعقد ہوئی جس میں دنیا بھر سے فنکاروں میں شرکت کی۔

94ویں آسکر ایوارڈ میں بہترین اداکار کا ایوارڈ ”ول سمتھ “کے نام رہا، یہ ایوارڈ فلم ”کنگ رچرڈ“میں بہترین کارکردگی دکھانے پر دیا گیا ۔بہترین اداکارہ کا ایوارڈ ”جیسکا چیسٹین نے اپنے نام کر لیا ”انہوں نے یہ ایوارڈ ”دی آئیزآف ٹمی فائے “میں بہترین اداکا ری پر جیتا ۔پاکستانی نژاد برطانوی اداکار ”رض احمد “نے شارٹ لائیو ایکشن فلم ”دی لانگ گڈ بائی“کا پہلا آسکر جیت لیا۔ گزشتہ سال بھی رض احمد کو فلم ساونڈ آف میٹل میں بہترین اداکاری پر نامزد کیا گیا تھا۔

دنیا کے سب سے بڑے فلمی میلے میں فلم کوڈا نے بہترین فلم کی کیٹیگری میں کامیابی حاصل کی۔آسکر ایوارڈز میں ٹرائے کوٹسور بہترین معاون اداکار قرار پائے، واضح رہے کہ ٹرائے کوٹسور قوت سماعت سے محروم ہیں اور انہیں یہ ایوارڈ فلم کوڈا میں اداکاری پر دیا گیا۔امریکی پاپ گلوکارہ بلی آئلش نے ”نو ٹائم ٹو ڈائی “پر بہترین اوریجنل گانے کا آسکر ایوارڈاپنے نام کیا۔

مزید :

تفریح -