28مارچ تاریخ کے آئینے میں 

 28مارچ تاریخ کے آئینے میں 
 28مارچ تاریخ کے آئینے میں 

  

٭: مارٹن لوتھر کنگ کو امریکی تاریخ ایک عظیم رہنما کے طور پر یاد کرتی ہے ، انہوں نے کمزور طبقے سے تعلق رکھنے والے ہزاروں لوگوں کو حقوق دلوائے ۔ آج کے دن یعنی 28مارچ کی خاص بات یہ ہے کہ آج ہی کے روز 1965ءمیں غیر مساوی سلوک سے تنگ آ کر 25ہزار سے زائد افراد نے مارٹن لوتھر کنگ کی قیادت میں امریکی ریاست الابامہ میں پیدل مارچ کیا ۔ اس مارچ کا مقصد غیر مساوی سلوک کیخلاف آواز اٹھانا اور سماجی اور مساوی حقوق کیلئے جدوجہد کرنا تھا ۔

٭:آج کے دن 1866ءکو پہلی مرتبہ ایئر ایمبولینس کا لفظ استعمال کیا گیا ۔ ایک سمندری جہاز کے حادثے کے نتیجے میں پھنسے عملے کو ایئر بلون کے ذریعے ریسکیو کیا گیا تھا ۔ اس موقع پر ایئر بلون کو ایئر ایمبولینس کا نام دیا گیا تھا ۔ ایئر ایمبولینس کی جدید قسم آج کل ہوائی جہاز کی صورت میں نظر آتی ہے ۔ کئی ممالک میں ڈرون کو بھی ایمرجنسی سروسز کیلئے استعمال کیا جاتا ہے ۔ 

٭:آج ہی دن 28مارچ 1891ءکو دنیا کی پہلی ویٹ لفٹنگ چیمپیئن شپ کا انعقاد کیا گیا ۔ دنیا کے 6ممالک کی نمائندگی کرتے ہوئے 7کھلاڑیوں نے اس مقابلے میں حصہ لیا ۔ دنیا کی پہلی ویٹ لفٹنگ چیمپئین شپ کا انعقاد برطانیہ کے شہر لندن میں کیا گیا ۔ اس چیمپئین شپ میں سخت مقابلے کے بعد برطانیہ نے دنیا کا پہلا ویٹ لفٹنگ چیمپئین ہونے کا اعزاز اپنے نام کیا ۔ 

٭:آج ہی کے دن 1910ءمیں ہنری فور بی وہ پہلے شخص تھے جنہوں نے پانی سے اڑان بھرنے والا جہاز اڑایا ۔ فرانس کے قریب اس جگہ کو مختص کیا گیا جہاں سے اس جہاز نے پرواز کرنا تھی۔ اس جگہ کو پانی کا رن وے بھی کہا جاتا ہے جس وقت جہاز نے پانی سے پرواز کی یہ وہ وقت تھا جب ہوا بازی میں مسلسل نئے تجربات کئے جا رہے تھے ۔ اس جہاز کو زیادہ شہرت اس لئے بھی حاصل ہوئی کیونکہ یہ پانی سے ٹیک آف کر سکتا تھا اور لینڈنگ بھی ۔ اس جہاز کو اڑنے یا ترنے کیلئے کسی بھی زمینی رن وے کی ضرورت نہیں تھی ۔ 

٭:آج ہی کے دن مغربی انڈونیشیا میں واقع جزیرے سماٹرا میں جسے دنیا کا چھٹا بڑا جزیرہ ہونے کا بھی اعزاز حاصل ہے میں 2005ءمیں شدید زلزلہ آیا ۔ زلزلے کے نتیجے میں تقریباً 1300افراد لقمہ اجل بنے ۔ 1965ءکے بعد یہ سماٹرا میں آنیوالا سب سے بڑا زلزلہ تھا جس کی شدت 8.7ریکارڈ کی گئی ۔ اس زلزلے کو انڈونیشیا کی تاریخ کے خوفناک ترین زلزلوں میں شمار کیا جاتا ہے ۔ 

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -