خواتین کے بارے میں ایک بات جسے تمام مرد سچ سمجھتے ہیں ،سائنسدانوں نے غلط ثابت کر دی،مردوں کو آئینہ دکھا دیا

خواتین کے بارے میں ایک بات جسے تمام مرد سچ سمجھتے ہیں ،سائنسدانوں نے غلط ثابت ...
خواتین کے بارے میں ایک بات جسے تمام مرد سچ سمجھتے ہیں ،سائنسدانوں نے غلط ثابت کر دی،مردوں کو آئینہ دکھا دیا

  

نیویارک (نیوز ڈیسک) ہر کوئی یہی کہتا پایا گیا ہے کہ عورتیں بہت زیادہ بولتی ہیں اور اس بات کو تقریباً ایک کائناتی سچ کی حیثیت حاصل ہوچکی ہے لیکن ایک معتبر یونیورسٹی کی تحقیق نے حیرت انگیز انکشاف کرتے ہوئے اس بات کو غلط قرار دے دیا ہے۔

امریکا کی پرنسٹن یونیورسٹی کے تحقیق کاروں کا کہنا ہے کہ عورتیں مردوں کی نسبت زیادہ نہیں بلکہ کم، بلکہ بہت کم بولتی ہیں۔ اگرچہ آپ کو یہ بات ناقابل یقین محسوس ہوگی لیکن سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ خواتین محض اس صورت میں زیادہ بولتی ہیں جب ان کی تعداد مردوں کی نسبت بہت زیادہ ہو۔ مثال کے طور پر اگر ایک کمرے میں عورتیں اور مرد برابر تعداد میں موجود ہیں تو مرد عورتوں کی نسبت کہیں زیادہ بولیں گے جبکہ عورتوں کی تعداد 60 فیصد ہوجانے پر بھی مرد ہی زیادہ باتیں کریں گے۔ اگر خواتین کی تعداد تقریباً 80 فیصد تک پہنچ جائے تو اس صورت میں وہ مردوں کی نسبت زیادہ باتیں کریں گی۔

 تحقیق میں یہ بھی معلوم ہوا کہ ہر قسم کی سماجی جگہوں مثلاً یونیورسٹی، لیبارٹری، کلاس روم اور کاروباری میٹنگ وغیرہ میں زیادہ باتیں کرنے والے مرد ہی ہوتے ہیں۔ اگرچہ اکثر مردوں کو یہ تحقیق پسند نہیں آئی لیکن ماہرین کا کہنا ہے کہ اگلی بار آپ خود مشاہدہ کیجئے گا اور ذرا ٹھنڈے دل سے غور کیجئے گا، یقیناً آپ کو سچ جان کر حیرت ہوگی۔

مزید : ڈیلی بائیٹس