امریکہ کے ایگزم بینک اورلاہورچیمبرکامل کرکام کرنے پراتفاق

امریکہ کے ایگزم بینک اورلاہورچیمبرکامل کرکام کرنے پراتفاق

 لاہور ( کامرس رپورٹر)پاکستانی درآمد اور برآمد کنندگان کو سہولیات مہیا کرنے کے لیے امریکہ کا ایکسپورٹ امپورٹ بینک (ایگزم)اور لاہور چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری مل کر کام کریں گے۔ یہ فیصلہ امریکی بینک ایگزم کے شعبہ گلوبل بزنس ڈویلپمنٹ کے نائب صدر ریمنڈ جے ایلس کے درمیان لاہور چیمبر میں ہونے والی ملاقات کے موقع پر ہوا۔ امریکی قونصل جنرل زچیری ہرکنرائیڈر، کمرشل قونصلر شرلے جے ڈکلو، لاہور چیمبر کے سینئر نائب صدر میاں نعمان کبیر، سابق سینئر نائب صدر میاں طارق مصباح اور ایگزیکٹو کمیٹی اراکین بھی اجلاس میں موجود تھے۔ دونوں اداروں کے سربراہان نے کہا کہ ایگزم بینک اور لاہور چیمبر کے درمیان دیرپا اور بامعنی شراکت داری دوطرفہ تجارتی و معاشی تعاون کو فروغ دینے میں اہم کردار ادا کرسکتی ہے۔ ریمنڈ جے ایلس نے لاہور چیمبر کے صدر کو آگاہ کیا کہ ایکسپورٹ امپورٹ بینک امریکہ کی درآمدات اور برآمدات کو فروغ دینے میں اہم کردار ادا کررہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایگزم کے قیام کا مقصد درآمدی اور برآمدی شعبوں کو سہولت دیکر ملک میں روزگار کے نئے مواقع پیدا کرنا ہے۔ اْن کا بینک امریکی مصنوعات کے خریداروں کو فنانسنگ کی سہولیات بھی مہیا کرتا ہے۔ صدر اعجاز اے ممتاز نے کہا کہ دونوں اداروں کے درمیان شراکت داری بہت اہم نتائج کی حامل ہوسکتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ امریکہ پاکستان کا اہم تجارتی حصے دار ہے اور برآمدات کے حوالے سے پہلے جبکہ درآمدات کے حوالے سے آٹھویں نمبر پر ہے۔ انہوں نے کہا کہ 2014ء میں پاکستان کی امریکہ کو برآمدات اور درآمدات کا حجم بالترتیب 3.65ارب ڈالر اور 1.80ارب ڈالر رہا۔ اعجاز اے ممتاز نے کہا کہ امریکہ کے ساتھ تجارت کرنے والے درآمد اور برآمد کنندگان کو بہت سے چیلنجز کا سامنا ہے، ایگزم بینک کی طرف سے عالمی خریداروں کو دی جانے والی کریڈٹ کی سہولیات لاہور چیمبر کے ممبران کے لیے بھی بہت مفید ثابت ہوسکتی ہیں۔ انہوں نے ایگزم بینک کے نائب صدر پر زور دیا کہ وہ لاہور چیمبر کے ممبران کے لیے خصوصی پیکیج کا اعلان کریں۔ اعجاز اے ممتاز نے پاکستان اور امریکہ کے درمیان تجارت کو فروغ دینے کے لیے لاہور میں امریکی قونصلیٹ کی کاوشوں کو بھی سراہا۔

مزید : کامرس