خواتین کھلاڑیوں سے شرمناک تعلقات کا سکینڈل ، سری لنکن کرکٹ بورڈ کے تین عہدیدار فارغ

خواتین کھلاڑیوں سے شرمناک تعلقات کا سکینڈل ، سری لنکن کرکٹ بورڈ کے تین ...
خواتین کھلاڑیوں سے شرمناک تعلقات کا سکینڈل ، سری لنکن کرکٹ بورڈ کے تین عہدیدار فارغ

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

کولمبو(مانیٹرنگ ڈیسک) سری لنکن کرکٹ بورڈ نے خواتین کھلاڑیوں کوجنسی طورپر ہراساں کرنے کا اعتراف کرتے ہوئے بورڈ کے تین آفیشلز کو فارغ کردیاہے اور یہ وضاحت بھی کی ہے کہ سری لنکن ویمن کرکٹ میں تھرتھلی مچانے والے سکینڈل میں تین مردعہدیداروں کے ملوث ہونے کے شواہد ملے ہیں تاہم ایسے ٹھوس ثبوت نہیں جن کی بنیادپر قانونی کارروائی عمل میں لائی جاسکے ۔

ایمریٹس 24/7کے مطابق سری لنکن کرکٹ کی گورننگ باڈی نے اعلان کیاکہ اس سکینڈل کے بعد تین عہدیداروں کو بورڈ سے فارغ کردیاگیاہے جس میں خواتین کھلاڑیوں کو کہاگیاتھاکہ ٹیم میں اپنی جگہ بنانے کے لیے جسمانی تعلقات قائم کریں ، اندرونی تحقیقات کے نتیجے میں یہ ثابت ہواکہ دوعہدیدار جنسی ہراساں کرنے میں ملوث ہیں جبکہ تیسرے نے کوڈآف کنڈکٹ پر عمل نہیں کیا۔

کرکٹ بورڈ نے کہاکہ اُنہیں ایک رپورٹ ملی تھی جس میں2013-14ءمیں ہونیوالے جنسی طورپر ہراساں کرنے کے واقعات کا ذکر تھا اور ایک دوسری رپورٹ ملنے پر بورڈنے تحقیقاتی کمیٹی قائم کی تھی ۔

مزید : کھیل