میرا ایمان ہے الیکشن اسی سال ہو گا، بلدیاتی انتخاب کے ذریعے خیبرپختونخواہ میں انقلاب لا رہے ہیں: عمران خان

میرا ایمان ہے الیکشن اسی سال ہو گا، بلدیاتی انتخاب کے ذریعے خیبرپختونخواہ ...
میرا ایمان ہے الیکشن اسی سال ہو گا، بلدیاتی انتخاب کے ذریعے خیبرپختونخواہ میں انقلاب لا رہے ہیں: عمران خان

سکردو (مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین نے کہا ہے کہ میرا ایمان ہے کہ الیکشن اسی سال ہو گا اور تحریک انصاف کی حکومت آئے گی اور اس سے پہلے بلدیاتی الیکشن کے ذریعے خیبرپختونخواہ میں انقلاب لا رہے ہیں۔ موجودہ حکمران ڈویلپمنٹ فنڈز کے ذریعے لوگوں کو خریدتے ہیں اور خادم اعلیٰ کہلانے والے پولیس کے ذریعے لوگوں کو مرواتے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق سکردو میں تحریک انصاف کے جلسے سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ عوام ووٹ مانگنے والی جماعت سے چند سوالات ضرور کریں اور ان سے پوچھیں کہ تین تین باریاں لے کر آپ کیلئے کیا کیا؟ انہوں نے کہا کہ وہ 15 سال کی عمر میںقراقرم آئے اور 26 سال پہلے سکردو آئے تھے اور اس وقت یہاں کی سڑک کی حالت آج سے بہت بہتر تھی۔ وقت گزرنے کے ساتھ سکردو اور اس کے عوام کے حالات میں بہتری آنے کے بجائے تنزلی ہوئی ہے لیکن خوشی کی بات ہے کہ گلگت بلتستان کے عوام کو اپنے حقوق کی سمجھ آ گئی ہے۔

عمران خان نے کہا کہ الیکشن سے پہلے نواز شریف کو سکردو کے عوام یاد آئے اور کہا کہ گلگت کے لوگوں کو 47 ارب روپے کا پیکیج دے رہا ہوں۔ میاں صاحب! گلگت میں انسان بستے ہیں جو شعور رکھتے ہیں، ان کی قیمت نہ لگائیں۔ جو تین باری میں حالات ٹھیک نہیں کر سکا چوتھی بار کیا کرے گا۔

عمران خان نے کہا کہ اللہ تعالی نے مسلمانوں پر انصاف کرنا فرض کیا ہے کیونکہ کوئی بھی معاشرہ انصاف کے بغیر آگے نہیں بڑھ سکتا۔ آصف زرداری اور نواز شریف کے اربوں روپے باہر پڑے ہیں لیکن سیاست پاکستان میں کر رہے ہیں۔ اپنے اربوں روپے باہر کے ملکوں میں رکھ کر لوگوں سے پاکستان میں سرمایہ کاری کیلئے کہہ رہے ہیں لیکن اب یہ منافقت نہیں چلے گی کیونکہ عوام حقوق کے بارے میں جان چکے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ خیبرپختونخواہ میں بلدیاتی الیکشن کے ذریعے 45000 ہزار لوگ منتخب ہو کر آئیں گے اور صوبے میں صحیح معنوں میں انقلاب آئے گا۔ میاں نواز شریف اور آصف علی زرداری سے پوچھیں کہ انہوں نے کتنی بار بلدیاتی انتخابات کرائے؟ دونوں پارٹیاں بلدیاتی انتخابات اس لئے نہیں کراتیں کیونکہ اختیارات نچلی سطح پر منتقل کرنے پڑتے ہیں لیکن یہ جمہوریت کے بادشاہ بنے بیٹھے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ حکمران ڈویلپمنٹ فنڈز کے ذریعے لوگوں کو خریدتے ہیں اور پولیس کے ذریعے لوگوں کو مرواتے ہیں لیکن خیبرپختونخواہ میں پولیس غیر سیاسی ہے۔ تحریک انصاف کی حکومت کو 2 سال ہو چکے ہیں اور اس عرصے میں کسی ایک بھی شخص کی سفارش نہیں کی اور ہمیشہ میرٹ کو ترجیح دی۔

مزید : قومی /اہم خبریں

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...