ورلڈکپ میں پاکستان کے پہلے میچ نے مشتاق احمد کو شدید مشکل میں ڈال دیا مگر کیوں؟ جان کر آپ بھی خوشگوار حیرت میں مبتلا ہو جائیں

ورلڈکپ میں پاکستان کے پہلے میچ نے مشتاق احمد کو شدید مشکل میں ڈال دیا مگر ...
ورلڈکپ میں پاکستان کے پہلے میچ نے مشتاق احمد کو شدید مشکل میں ڈال دیا مگر کیوں؟ جان کر آپ بھی خوشگوار حیرت میں مبتلا ہو جائیں

  



لندن (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان کے مایہ ناز سابق کرکٹر اور آئی سی سی ورلڈکپ 2019ءمیں ویسٹ انڈیز ٹیم کیساتھ بطور اسسٹنٹ کوچ فرائض سرانجام دینے والے مشتاق احمد نے کہا ہے کہ ورلڈکپ میں پاکستان کیخلاف پہلے میچ نے انہیں مشکل میں ڈال دیا ہے لیکن پیشہ وارانہ طور پر وہ ویسٹ انڈیز ٹیم کیساتھ مخلص ہیں۔

مشتاق احمد کا کہنا ہے کہ میرا  دل پاکستانی ہے اور ہمیشہ رہے گا لیکن پیشہ وارانہ طور پر میں ویسٹ انڈیز ٹیم کے ساتھ مخلص ہوں۔ انہوں نے کہا کہ جب میں انگلینڈ ٹیم کے ساتھ تھا تو کوشش ہوتی تھی جب پاکستان کے خلاف میچ ہو تو کم ہی بولوں، میں اب بھی کم ہی بولوں گا لیکن جب کھلاڑیوں کو ضرورت ہو گی تو ویسٹ انڈیز ٹیم کی پوری طرح سے مدد کروں گا۔ 

مشتاق احمد کا ماننا ہے کہ ویسٹ انڈیز کی ٹیم پاکستان پر اٹیک کرنے کی کوشش کرے گی کیونکہ جارحانہ انداز سے ہی اسے کامیابی ملے گی۔ان کی ٹیم میں چار، پانچ فاسٹ باؤلرز کی رفتار 90 سے اوپر ہے اور وہ باؤٔنسرز کرنا جانتے ہیں اور وہ پاکستان ٹیم کو باؤنسرز مار کر دباؤ میں لائیں گے۔

مشتاق احمد کے مطابق کرس گیل اور اینڈرے رسل کے آنے سے ویسٹ انڈیز کی باﺅلنگ بھی مضبوط ہوئی ہے، شئی ہوپس بھی اچھی بیٹنگ کر رہے ہیں،  اس لئے ویسٹ انڈیز کی بیٹنگ پاکستان ٹیم کیلئے مشکلات پیدا کر سکتی ہے۔سابق کرکٹر نے کہا کہ دونوں ٹیمیں اٹیک کرنے کی کوشش کریں گی اور جو زیادہ اٹیک کرنے میں کامیاب ہوئی وہ جیتے گی۔

مزید : کھیل