پاک بھارت تعلقات میں بہتری کی امید کے تناظر میں مظہر عباس کا تہلکہ خیز تجزیہ

پاک بھارت تعلقات میں بہتری کی امید کے تناظر میں مظہر عباس کا تہلکہ خیز تجزیہ
پاک بھارت تعلقات میں بہتری کی امید کے تناظر میں مظہر عباس کا تہلکہ خیز تجزیہ

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) تجزیہ کار مظہر عباس نے کہاہے کہ ایک ملک میں جب انتہاءپسندی اور پاکستان مخالف ووٹ پڑتاہو تو اس سے نہیں لگتا کہ صورتحال میں کوئی بہتری آجائے گی جس ڈگر پر مودی چل پڑا ہے ، اس سے بہتری کی کوئی امید نہیں ہے ۔

جیونیوز کے پروگرام ”رپورٹ کارڈ“میں گفتگو کرتے ہوئے مظہر عباس نے کہا کہ واجپائی اور مودی کی سوچ میں زمین و آسمان کافرق ہے ، آگرہ ایک ٹرننگ پوائنٹ تھا ، اس موقع پر پرویز مشرف جتنا آگے گئے ، اس سے آگے نہیں جایا جاسکتا تھا ۔

انہوں نے کہا کہ ہم کوششیں کرتے ہیں کہ صورتحال بہتر ہوجائے لیکن ایک ملک میں جب انتہاءپسندی اور پاکستان مخالف ووٹ پڑتاہو تو اس سے نہیں لگتا کہ صورتحال میں کوئی بہتری آجائے گی ، اگر اس میں کچھ طاقتیں پڑیں تو اس سے ہوسکتا ہے کہ کچھ ہوجائے بصورت دیگر جس ڈگر پر مودی چل پڑا ہے ، اس سے پاک بھارت تعلقات میں بہتری کی کوئی امید نہیں ہے ۔

مزید : قومی


loading...