جہانگیر ترین نے پی ٹی آئی میں اپنی اہمیت کے بارے میں ایسی بات کہہ دی کہ شاہ محمود قریشی بھی حیران پریشان رہ جائیں گے

جہانگیر ترین نے پی ٹی آئی میں اپنی اہمیت کے بارے میں ایسی بات کہہ دی کہ شاہ ...
جہانگیر ترین نے پی ٹی آئی میں اپنی اہمیت کے بارے میں ایسی بات کہہ دی کہ شاہ محمود قریشی بھی حیران پریشان رہ جائیں گے

  



اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن ) پاکستان تحریک انصاف کے مرکزی رہنما جہانگیر خان ترین نے کہا ہے جماعت میں ان کی اتنی اہمیت نہیں ہے جتنی لوگ سمجھتے ہیں، اسد عمر کو ہٹانے کا فیصلہ ان اجلاسوں میں ہوا جن میں وزیراعظم کے انتہائی قریبی لوگ بیٹھتے ہیں، یہ مشکل فیصلہ تھا جو عمران خان نے خود کیا۔ان کا کہنا تھا کہ آئی ایم ایف سے قرض لینے کے معاملے پر پی ٹی آئی رہنما نے اعتراف کیا کہ ہمیں اکتوبر میں ہی یہ فیصلہ کرلینا چاہیے تھا۔انہوں نے کہا کہ آئی ایم ایف کی شرائط آج بھی وہی ہیں جو اکتوبر میں تھیں، کسی نہ کسی کو اس بات کی ذمہ داری لینی ہوگی کہ آئی ایم ایف کے پاس جانے میں تاخیر کیوں ہوئی۔

نجی نیوز چینل ہم نیوز کے پروگرام ’ندیم ملک لائیو‘ میں ان کا کہنا تھا کہ نئی ٹیم کا انتخاب بھی عمران خان نے خود کیا ہے انہیں کسی نے نام نہیں دیے۔عبد الحفیظ شیخ کے بارے میں ان کا کہنا تھا کہ وزیراعظم نے ان کے تین انٹرویو کیے تھے تب جا کرانہیں منتخب کیا گیا۔گورنراسٹیٹ بینک رضا باقر اور وزیر خزانہ کا مشورہ وزیراعظم کے انتہائی قریبی رفقا نے دیا تھا۔چیئرمین ایف بی آر شبر زیدی کے بارے میں جہانگیرخان ترین کا کہنا تھا کہ وہ بھی عمران خان کا اپنا انتخاب ہیں، وزیراعظم نے کسی سے مشورہ نہیں کیا۔الیکشن مہم میں آزاد امیدوار لانے کے سوال پر انہوں نے جواب دیا کہ میں صرف لے کر آتا تھا پارٹی میں شامل کرنے کا فیصلہ عمران خان مکمل انٹرویو اور بات چیت کے بعد کرتے تھے۔

مزید : قومی


loading...