کارکن رکاوٹیں توڑ کر 30نومبر کو اسلام آباد پہنچیں، عمران خان

کارکن رکاوٹیں توڑ کر 30نومبر کو اسلام آباد پہنچیں، عمران خان

  

لاہور ( جنرل رپورٹر ،خصو صی رپورٹ) تیس نومبر کے احتجاج میں اہل لاہور کی شرکت کو یقینی بنانے کے لئے عمران خان نے پارٹی کارکنوں اور عہدیداران کے اجلاس میں شرکت کی۔ پْرجوش کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان کا کہنا تھا کہ کارکن ہر صورت اسلام آباد اپنی آمد کو یقینی بنائیں۔ تحریک انصاف کے چیئرمین نے اعلان کیا کہ وہ اٹھائیس نومبر سے ہی ڈی چوک میں ہی قیام کریں گے۔ اس سے قبل لاہور میں پاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن کی قومی صحت پالیسی اور سیاسی جماعتوں کے وڑن پر منعقدہ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان کا کہنا تھا کہ نئے پاکستان کے لئے ایسی پالیسی بنائیں گے کہ گیارہ کروڑ عوام کو غربت سے کس طرح نکالنا ہے۔ عمران خان نے کہا کہ لاہور میں چالیس ارب کی میٹرو بنائی گئی اور ماہانہ دو ارب اس پر خرچ ہو رہے ہیں۔عمران خان نے کہا ہے کہ دھاندلی سے حکومت میں آنے والے 70 فیصد ٹیکس نہیں دیتے۔ موجودہ اور سابق حکمران سب سے بڑے ٹیکس چور ہیں۔ عمران خان نے کہا ہے کہ 30 نومبر کو اسلام آباد میں بڑا معرکہ ہونے والا ہے کارکن اپنی تمام توانائیاں بچا کر رکھیں جب کہ ملک کی جڑوں میں بیٹھا طاقتور طبقہ نہیں چاہتا کہ انتخابات میں دھاندلی کی تحقیقات ہوں کیونکہ اگر ایسا ہوا تو پھر وہ کبھی اقتدار میں نہیں آسکے گا ۔ظلم کودیکھتے ہوئے قبول کرنے سے معاشرہ تباہی کی طرف جاتا ہے ہم نے ظلم کے خلاف جہاد کرنا ہے ۔نواز شریف اور زرداری سب سے بڑے چور ہیں ۔نوازشریف دنیا کاامیرترین آدمی ہے ٹیکس کیوں نہیں دیتاجبکہ جہانگیر ترین نے اڑھائی کروڑ روپے ٹیکس دیا ہے

مزید :

صفحہ اول -