تیس نومبر کی کال ، ضلعی انتظامیہ نے تحریک انصاف کو جلسے کی اجازت دے دی

تیس نومبر کی کال ، ضلعی انتظامیہ نے تحریک انصاف کو جلسے کی اجازت دے دی
تیس نومبر کی کال ، ضلعی انتظامیہ نے تحریک انصاف کو جلسے کی اجازت دے دی

  

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) وفاقی دارالحکومت کی ضلعی انتظامیہ نے تحریک انصاف کو 30 نومبر کے جلسے کی اجازت دے دی ہے۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائی کورٹ میں تحریک انصاف کے 30 نومبر کے جلسے کی اجازت سے متعلق جہانگیر ترین اور اسد عمر کی جانب سے دائر درخواستوں کی سماعت ہوئی جس میں ضلعی انتظامیہ نے عدالت کو بتایا کہ 30 نومبر کو جلسے کے لیے تحریک انصاف سے معاہدہ طے پا گیا ہے جس کے تحت تحریک انصاف کو وفاقی دارالحکومت میں جلسے کی اجازت دے دی گئی ہے۔

ضلعی انتطامیہ نے معاہدے کی کاپی عدالت میں پیش کی جس کے مطابق معاہدے میں اتفاق کیا گیا ہے کہ 30 نومبر کو تحریک انصاف کے جلسے میں انتظامیہ کی اجازت کے بغیر پولیس کو کارکنوں کی گرفتاری کا اختیار نہیں ہوگا جبکہ دوران سماعت عدالت نے ریمارکس دیئے ہیں کہ وفاقی حکومت کی جانب سے بھی امن وامان کی صورتحال برقرار رکھنے کی یقین دہانی کرائی گئی ہے جس کے بعدسماعت 2 دسمبر تک ملتوی کردی ہے۔

دوسری جانب 30 نومبر سے قبل ہی انتظامیہ نے اسلام آباد کی اہم شاہراہوں اور داخلی راستوں پر کنٹینر لگا کر رکاوٹیں کھڑی کردی ہیں اور ریڈ زون کے اطراف پولیس کی بھاری نفری بھی تعینات کردی گئی ۔

مزید :

قومی -Headlines -