نوجوان جڑواں بہنوں کے ساتھ دل لگانا 84سالہ ’بابے‘ کو مہنگا پڑھ گیا

نوجوان جڑواں بہنوں کے ساتھ دل لگانا 84سالہ ’بابے‘ کو مہنگا پڑھ گیا
نوجوان جڑواں بہنوں کے ساتھ دل لگانا 84سالہ ’بابے‘ کو مہنگا پڑھ گیا

  

نیویارک (نیوز ڈیسک) عمر بڑھنے کے ساتھ انسان میں تہذیب و اخلاق اور نیک کردار کا احساس بڑھتا جاتا ہے لیکن نیویارک شہر کے ایک معمر شخص کے دل میں نوعمر لڑکیوں کی دوستی کا شوق زور پکڑ گیا جس کا اسے عبرتناک انجام بھی دیکھنا پڑ گیا۔

چوراسی سال کی عمر میں پال اونسن نامی بوڑھے نے انٹرنیٹ پر شائنا نامی 17 سالہ لڑکی سے دوستی کر لی۔ ابتدائی راہ و رسم کے بعد پال کی خوشی کی اس وقت انتہاءنہ رہی جب اسے پتا چلا کہ شائنا کی ایک جڑواں بہن شالین بھی ہے۔ اس نے دونوں بہنوں کو ملاقات کیلئے بلالیا اور ایک مہنگے ہوٹل میں کھانا کھانے کے بعد پال انہیں اپنے گھر لے گیا۔ اس کے بعد جو ہوا اس کی تفصیلات پولیس نے بتائی ہیں۔ پولیس کو پال کی کال موصول ہوئی کہ اسے اس کے گھر میں رسیوں سے باندھ کر کوئی اس کی رقم لے اڑا ہے۔ جب قانون حرکت میں آیا تو کچھ ہی دیر میں دونوں جڑواں بہنیں گرفتار ہو گئیں۔ شائنا نے عدالت کو بتایا کہ پال نے انہیں گھر لے جا کر کچھ شیطانی حرکات کی فرمائش کی جس پر اسے غصہ آ گیا اور انہوں نے اسے رسیوں سے باندھ کر اس کی رقم اور کریڈٹ کارڈ اڑا لیا۔ بعد ازاں انہوں نے دل کھول کر خریداری بھی کی۔ شائنا نے اس بات پر سخت حیرانی کا اظہار کیا کہ بڑے میاں نے شرمندہ ہونے کے بجائے پولیس بلوا لی تھی۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -