کاروباری ہفتے کے آخری روزانڈیکس 33000کی نفسیاتی حد سے گرگیا

کاروباری ہفتے کے آخری روزانڈیکس 33000کی نفسیاتی حد سے گرگیا

کراچی (اکنامک رپورٹر )کراچی اسٹاک ایکس چینج میں مندی کا تسلسل کاروباری ہفتے کے آخری روز جمعہ کو بھی برقرار رہا اور کے ایس ای 100انڈیکس 33000کی نفسیاتی حد سے بھی گرگیا ۔سرمایہ کاری مالیت میں20رب26کروڑ روپے سے زائد کی کمی ،کاروباری حجم گذشتہ روز کی نسبت12.65 فیصدکم جبکہ55.78فیصدحصص کی قیمتوں میں کمی ریکارڈ کی گئی ۔حکومتی مالیاتی اداروں ،مقامی بروکریج ہاؤز اور دیگر انسٹی ٹیوشنز کی جانب سے توانائی،گیس اوربینکنگ سیکٹر میں خریداری کے باعث کاروبار کا آغاز مثبت زون میں ہوا ۔ٹریڈنگ کے دوران ایک موقع پر کے ایس ای 100انڈیکس 33132پوائنٹس کی بلند سطح پر بھی ریکارڈ کیا گیا ۔تاہم فروخت کے دباؤ اور پرافٹ ٹیکنگ کے باعث کے ایس ای 100انڈیکس مذکورہ سطح پر برقرار نہ رہ سکا اور تیزی کے اثرات زائل ہوگئے ۔ماہرین اسٹاک کے مطابق کیپٹل مارکیٹ کے غیرواضح سمت کی وجہ سے سرمایہ کاری کے تمام شعبے مضطرب ہیں اور وہ مارکیٹ میں کھل کرسرمایہ کاری کے بجائے مناسب قیمت پرحصص کی فروخت کو ترجیح دے رہے ہیں۔یہی وجہ ہے کہ خام تیل کی عالمی قیمت میں اضافے کے باوجود آئل سیکٹر کے حصص میں مطلوبہ دلچسپی کا فقدان رہا ہے، جس کے باعث مارکیٹ میں مندی دیکھی گئی ۔ مارکیٹ کے اختتام پر کے ایس ای 100انڈیکس119.10پوائنٹس کمی سے 32960.27پوائنٹس پر بند ہوا ۔ مجموعی طور پر346کمپنیوں کے حصص کا کاروبار ہوا ،جن میں سے 131کمپنیوں کے حصص کے بھاؤ میں اضافہ ،193کمپنیوں کے حصص کے بھاؤ میں کمی جبکہ22کمپنیوں کے حصص کے بھاؤ میں استحکام رہا ۔سرمایہ کاری مالیت میں20ارب،26کروڑ90لاکھ 68ہزار1روپے کی کمی ریکارڈ کی گئی جبکہ سرمایہ کاری کی مجموعی مالیت گھٹ کر69کھرب91ارب43کروڑ49لاکھ 29ہزار27روپے ہوگئی ۔جمعہ کو مجموعی طور پر کاروباری سرگرمیاں 12کروڑ 23لاکھ 26ہزار360شیئرز رہیں جوجمعرات کے مقابلے میں1کروڑ77لاکھ26ہزار250 شیئرزکم ہیں ،قیمتوں کے اتار چڑھاؤ کے حساب سے ایکسائیڈ پاک کے حصص سرفہرست رہے ،جس کے حصص کی قیمت15.92روپے اضافے سے977.92روپے اورشیلڈ کارپوریشن کے حصص کی قیمت14.15روپے اضافے سے297.15روپے ہوگئی ۔

نمایاں کمی ہینو پاک موٹرز کے حصص میں ریکارڈ کی گئی ،جس کے حصص کی قیمت54.28روپے کمی سے1045.17جبکہ نیسلے پاک کے حصص کی قیمت50.00روپے کمی سے8600.00روپے ہوگئی ۔جمعہ کوسوئی سدرن گیس کمپنی کی سرگرمیاں1کروڑ62لاکھ40ہزار شیئرز کے ساتھ سرفہرست رہیں ،جس کے شیئرز کی قیمت85پیسے کمی سے43.06روپے جبکہ پاک الیکٹرون کی سرگرمیاں1کروڑ33لاکھ11ہزار شیئرز کے ساتھ دوسرے نمبر پر رہیں ،جس کے شیرز کی قیمت45پیسے کمی سے65.89روپے ہوگئی ۔ کے ایس ای 30انڈیکس74.94پوائنٹس کمی سے 19405.58پوائنٹس ،کے ایم آئی انڈیکس490.45پوائنٹس کمی سے 54524.30جبکہ کے ایس ای آل شیئرز انڈیکس67.53پوائنٹس کمی سے 23098.44پر بند ہوا ۔

مزید : کامرس