2017میں بجلی کے متعدد منصوبے مکمل ہونے سے توانائی بحران کم ہو گا،شہباز شریف

2017میں بجلی کے متعدد منصوبے مکمل ہونے سے توانائی بحران کم ہو گا،شہباز شریف

لاہور(نمائندہ خصوصی) وزیراعلیٰ پنجاب محمدشہبازشریف نے کہا ہے کہ 2017 میں بجلی کے متعدد منصوبے مکمل ہونے سے ہزاروں میگاواٹ نیشنل گرڈ میں شامل ہوگی جس سے توانائی بحران کم ہوگا اور ملک میں لوڈشیڈنگ پر قابو پانے میں مدد ملے گی۔ اعلی سطحی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ توانائی بحران کے چیلنج سے نمٹنے کے لئے انتھک کاوشیں کی جا رہی ہیں ۔ توانائی بحران کے خاتمے کے لئے بجلی کے منصوبوں پر تیزی سے کام ہو رہا ہے ۔انہوں نے کہا کہ 1320 میگا واٹ کے ساہیوال کول پاور پراجیکٹ سے 2017 میں بجلی حاصل ہو گی اور اس منصوبے پر دن رات کام کیا جا رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پنجاب میں گیس کی بنیاد پر تین پاور پلانٹس کا سنگ بنیاد رکھ دیا گیا ہے ۔ گیس پر چلنے والے پاور پلانٹس مکمل ہونے سے 3600 میگا واٹ بجلی پیدا ہو گی۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم محمد نواز شریف کی قیادت میں گیس پاورپراجیکٹس میں شفافیت کی اعلی مثال قائم کرکے قوم کے 110 ارب روپے بچائے گئے ہیں۔ پاکستان کی تاریخ میں ارب ہا روپے کے قومی وسائل بچانے کی ایسی کوئی مثال نہیں ملتی۔ وزیر اعلی نے کہا کہ شفافیت اور اعلی معیار کے ساتھ منصوبوں کو آگے بڑھایا جا رہا ہے ۔ منصوبوں کے معیار پر کوئی سمجھوتہ نہیں ہوگا۔انہوں نے کہا کہ صوبے کے انفراسٹرکچر کو بہتر بنانے کے لئے اربوں روپے کے وسائل فراہم کئے گئے ہیں ۔ انفراسٹرکچر کے منصوبوں کی تکمیل سے عوام کو جدید سہولتیں میسر آئیں گی اور تجارتی و کاروباری سرگرمیاں بڑھیں گی۔دوسرے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعلیٰ پنجاب محمدشہبازشریف نے کہا ہے کہ لاہور اورنج لائن میٹروٹرین کا منصوبہ پاکستان کی تاریخ میں ٹرانسپورٹ کے شعبے میں سب سے بڑا اورمنفرد پراجیکٹ ہے ۔میٹروٹرین سے عوام کو آرام دہ ،باکفایت اورباوقار سفری سہولتیں میسر آئیں گی۔ منصوبے سے کوئی بھی تاریخی عمارت یامقام متاثرنہیں ہوگا۔تمام تاریخی مقامات اور عمارتوں کے تحفظ کو یقینی بنایا گیا ہے اور میں خود اس منصوبے کی نگرانی کر رہا ہوں۔منصوبے کے سول ورکس کے معیار پر کوئی سمجھوتہ نہیں ہوگا۔متعلقہ حکام تعمیراتی کام کی کوالٹی پر خصوصی توجہ دیں۔وزیر اعلی پنجاب محمد شہباز شریف نے ان خیالات کا اظہار گزشتہ روز ویڈیولنک کے ذریعے سول سیکرٹریٹ میں اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا جس میں اورنج لائن میٹروٹرین کے منصوبے کے سول ورکس پر پیش رفت کا تفصیلی جائزہ لیا گیا۔دریں اثناء انٹرنیشنل ہاکی فیڈریشن کے صدر لینڈرو نیگرے کی سربراہی میں وفد سے پاکستان میں ہاکی کے کھیل کے فروغ اور انٹرنیشنل ہاکی میچوں کی بحالی کے حوالے سے بات چیت کی گئی۔وزیراعلیٰ محمد شہباز شریف نے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان میں ہاکی کے کھیل کے فروغ کیلئے ہرممکن اقدام کیا جا رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ دہشت گردی کے خلاف جنگ میں شاندار کامیابیاں ملی ہیں اور پاک افواج نے دہشت گردوں اور ان کے سہولت کاروں کی کمر توڑ کر رکھ دی ہے جس سے پاکستان میں سکیورٹی کی صورتحال میں بہت بہتر ی آئی ہے۔ انہو ں نے کہا کہ پاکستان میں انٹرنیشنل ٹیموں کو لانے کیلئے انٹرنیشنل ہاکی فیڈریشن کو اپنا کردار ادا کرنا چاہیئے۔اس موقع پر انٹرنیشنل ہاکی فیڈریشن کے صدر لینڈرو نیگرے نے اس موقع پر بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان میں صورتحال بہتر ہو رہی ہے اور حالات انٹرنیشنل ہاکی کی بحالی کیلئے سازگار ہو ئے ہیں۔ ہماری پوری کوشش ہوگی کہ دیگر ممالک کی ٹیموں کو پاکستان میں ہاکی کھیلنے پر آمادہ کیا جائے اور اس ضمن میں میں اپنا کردار ادا کروں گا۔علاوہ ازیں برطانوی رکن پارلیمنٹ لارڈ نذیراحمد سے ملاقات میں وزیراعلیٰ کا کہنا تھا کہ پاکستان برطانیہ کیساتھ تعلقات کو بہت اہمیت دیتا ہے جبکہ ان کہ دورہ برطانیہ سے دونوں ملکوں کے درمیان تعلقات میں اضافہ ہوگا۔انہوں کہا کہ برطانیہ کیساتھ ایڈ کی بجائے ٹریڈ چاہتے ہیں اور تعلقات کو پائیدار اقتصادی روابط میں بدلنے کے خواہاں ہیں۔ لارڈ نذیر احمد نے وزیراعلیٰ کے عوام کی فلاح و بہبود کیلئے اٹھائے گئے اقدامات کو سراہا اور کہا کہ شہبازشریف نے پنجاب میں جس شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے عالمی ادارے بھی اس کے معترف ہیں۔

مزید : صفحہ اول