سپریم کورٹ ،منشیات کے سمگلر اور قتل کیس میں ملوث ملزم کی ضمانتیں مسترد

سپریم کورٹ ،منشیات کے سمگلر اور قتل کیس میں ملوث ملزم کی ضمانتیں مسترد

لاہور(نامہ نگار خصوصی )سپریم کورٹ نے منشیات کے سمگلر کی درخواست ضمانت مسترد کر دی ، جسٹس اعجاز احمد چودھری کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے غلام مرتضی کی درخواست ضمانت پر سماعت کی۔ ایڈیشنل پراسکیوٹر جنرل مظہر شیر اعوان نے پولیس ریکارڈ جمع کراتے ہوئے موقف اختیار کیا کہ پولیس نے ملزم کو رنگے ہاتھوں گرفتار کر کے اس کے قبضے سے 2کلو 60گرام چرس برآمد کی۔ سپریم کورٹ نے قتل کیس کے ملزم کی درخواست ضمانت خارج کر دی، جسٹس اعجاز احمد چودھری کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے ملزم رائے قمر عباس کی درخواست ضمانت پر سماعت کی۔سرکاری وکیل نے بنچ کو بتایا کہ زخمی نے ہوش میں آنے کے بعد ملزم کو شناخت کیا اور ضمنی میں نامزد کیا، پولیس تفتیش میں بھی ملزم گنہگار قرار دیا گیا ہے، فاضل بنچ نے دلائل سننے کے بعد ملزم کی درخواست ضمانت خارج کر دی۔سپریم کورٹ نے بجلی چوری میں ملوث 7ملزموں کی درخواست ضمانت مسترد کر دی ، جسٹس اعجاز احمد چودھری کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے ملزم محمد یونس، منظور حسین شاہ، محمد منظور حسین، ثقلین عباس، بلاور حسین، محمد بوٹا اور طاہر عباس کی درخواست ضمانت پر سماعت کی، سرکاری وکیل نے موقف اختیار کیا کہ ایس ڈی او گوجرانوالہ نے خود چھاپہ مارا جہاں ملزم تاروں سے براہ راست بجلی چوری کر رہے تھے، تمام ملزموں کو موقع پر ہی گرفتار کیا گیا ، فاضل بنچ نے ریکارڈ یکھنے کے بعد ملزموں کی درخواست ضمانت مسترد کر دی۔

مزید : صفحہ آخر