بیرون ملک بھارتی ارب پتی کے بیٹے کی شادی، 2 ارب روپے خرچ کرکے بھی دولہے کی سب سے بڑی خواہش پوری نہ ہوسکی

بیرون ملک بھارتی ارب پتی کے بیٹے کی شادی، 2 ارب روپے خرچ کرکے بھی دولہے کی سب ...
بیرون ملک بھارتی ارب پتی کے بیٹے کی شادی، 2 ارب روپے خرچ کرکے بھی دولہے کی سب سے بڑی خواہش پوری نہ ہوسکی

  

روم (نیوز ڈیسک) بھارت کی ارب پتی کاروباری شخصیت یوگیش مہتا نے اپنے اکلوتے بیٹے کی اٹلی میں ہونے والی شاندار شادی پر اربوں روپے بچھاور کردئیے، لیکن اطالوی حکام نے اس شادی میں عین اسی رسم کو خلاف قانون قرار دے دیا کہ جسے دولہا اپنے لئے سب سے اہم سمجھ رہا تھا، اور یوں اربوں خرچ کر کے بھی بیچارے کے ارمان پورے نہ ہوسکے۔

مزیدجانئے: سعودی شوہر بیماری کا بہانہ بنا کر بیوی کی دولت پر مصر میں رنگ رلیاں مناتے رنگے ہاتھوں پکڑاگیا ، خاتون عدالت پہنچ گئی

جریدے ڈیلی میل کے مطابق روہن مہتا کی شادی کی انتہائی بڑے پیمانے پر منعقد کی جانے والی تقریبات پر تقریباً ڈیڑھ کروڑ پاﺅنڈ (تقریباً اڑھائی ارب پاکستانی روپے) خرچ کئے گئے۔ دنیا بھر سے سینکڑوں مہمانوں کو جہازوں کے ذریعے لایا گیا اور فلورنس شہر کے مہنگے ترین ہوٹلوں میں ٹھہرایا گیا۔ دولہے کی شدید خواہش تھی کہ وہ اپنی بارات ہاتھی پر لے جائے گا۔ عین آخری لمحات پر اطالوی حکومت نے مداخلت کرتے ہوئے دولہے کی اس خواہش پر پانی ڈال دیا اور ہاتھی پر بارات لے جانے کی اجازت نہ دی۔ اطالوی حکام کا کہنا ہے کہ ہاتھی کا استعمال صحت و صفائی کے قوانین کی خلاف ورزی ہے جبکہ جانوروں کے حقوق کے پیش نظر بھی اس کی اجازت نہیں دی جاسکتی۔ روہن مہتا کی دلہن روشنی کا تعلق لندن سے ہے اور وہ ایک فیشن کمپنی کی مالک ہیں۔ شادی کے بعد دولہا دلہن دبئی میں قیام کا ارادہ رکھتے ہیں۔

مزید : ڈیلی بائیٹس