سعودی فوجی کے قتل میں ملوث داعش کا مشتبہ جنگجو گرفتار

سعودی فوجی کے قتل میں ملوث داعش کا مشتبہ جنگجو گرفتار

الریاض (این این آئی)سعودی عرب میں وزارت داخلہ کے حکام نے تبوک میں ایک فوجی کے قتل کے واقعے میں ملوّث مرکزی مشتبہ ملزم کو گرفتار کر لیا ۔میڈیارپورٹس کے مطابق گزشتہ روز حکام نے بتایا کہ ہایل زعل محمد العتوی نے عراق اور شام میں برسرپیکار سخت گیر جنگجو گروپ دولت اسلامیہ ( داعش) کی بیعت کررکھی تھی۔اس کو حکام نے سعودی فوجی عبداللہ ناصر الرشیدی کے قتل کے الزام میں حراست میں لیا ہے۔اس کے قبضے سے ایک بندوق بھی ملی ہے اور اس کے فورینزک ٹیسٹوں سے یہ بات ثبوت ہوگئی ہے مقتول فوجی کے قتل میں یہی ہتھیار استعمال کیا گیا تھا۔عبداللہ رشیدی کو گذشتہ ہفتے تبوک میں گھر سے کام پر جاتے ہوئے قتل کردیا گیا تھا۔

ان پر ایک نامعلوم شخص نے فائرنگ کی تھی۔اب اس مشتبہ شخص کو مزید تفتیش کے لیے حراست میں لے لیا گیا ہے۔

مزید : عالمی منظر