جنرل باجوہ کے آتے ہی خالصتان تحریک کے رہنماءکے فرار ہونے پر بھارت نے آئی ایس آئی پر سنگین الزام لگادیا

جنرل باجوہ کے آتے ہی خالصتان تحریک کے رہنماءکے فرار ہونے پر بھارت نے آئی ایس ...
جنرل باجوہ کے آتے ہی خالصتان تحریک کے رہنماءکے فرار ہونے پر بھارت نے آئی ایس آئی پر سنگین الزام لگادیا

  

نئی دہلی (مانیٹرنگ ڈیسک)جیل پر حملے کے بعد خالصتان تحریک کے رہنماءہرمندر سنگھ منٹو کے فرار ہونے پر بھارتی پولیس نے حسب معمول الزام پاکستان کی خفیہ ایجنسی پر دھردیا لیکن اپنے ہی میڈیا نے ایسے سوالات اٹھائے کہ بڑی شرمندگی کا سامنا کرنا پڑا۔

بھارتی ٹی وی چینل اب تک کے مطابق پنجاب جیل بریک معاملے میں اہم پیش رفت ہوئی ہے ، پنجاب پولیس کے ذرائع (سوتروں) کے مطابق پٹیالہ کی نابھہ جیل پر حملے اور خالصتان لبریشن فورس کے سرغنہ ہرمندر سنگھ کو فرار کرانے پیچھے پاکستانی خفیہ ایجنسی آئی ایس آئی کا ہاتھ ہے ، وہ آئی ایس آئی سے رابطے میں تھا اور ایجنسی کے کیمپ میں ٹریننگ بھی لے چکا تھا۔

پاک فوج کے نئے سربراہ جنرل قمرباجوہ کے والد ’ربوہ‘نہیں،گکھڑمنڈی میں دفن ہیں، حقیقت سامنے آگئی

چینل نے اپنی رپورٹ میں کہاکہ ہرمندر سنگھ کا فرار ہوناآئی ایس آئی کی سازش بتائی جارہی ہے لیکن حیرت کی بات ہے کہ جیل پر حملے کے بعد فرار ہونیوالے افرادکھلے گھومتے رہے اور کسی میں پکڑنے کی ہمت نہیں ہوئی ، کوئی پولیس اہلکار دور دو رتک نہیں تھا۔ حملہ آور دوگاڑیوں میں آئے اور پولیس وردیوں میں ملبوس حملہ آوروں کے گاڑی سے اترتے ہی جیل کے دروازے کھول دیئے گئے ،چھوٹے ہتھیاروں سے لیس حملہ آور جیل کے دوسرے گیٹ پر گئے جہاں فائرنگ کرکے سیکیورٹی اہلکارکوزخمی کردیا، اسی دوران ہرمندر سنگھ منٹو اور اس کے ساتھی بھی بیرکوں سے نکل آئے اور جیل کے باہر تھوڑی دوری پر کھڑی تین گاڑیوں میں بیٹھ کر نکل گئے ، فرار ہوتے ہوئے ایک ریلوے پھاٹک بند ملی تو فائرنگ کرتے ہوئے واپس لوٹے اور جیل کے باہر سے ہوئے فرار ہوگئے ۔

یہودیوں کے روحانی پیشوا نے عجیب غریب فتوی دیدیا,1600 شادی شدہ عورتوں کے گھر اجاڑ دیے

دوسری طرف دہلی پولیس نے دعویٰ کیا ہے کہ ایک دن بعد پیرکو اُنہیں گرفتار کرکے دوبارہ جیل منتقل کردیاگیا۔

مزید : بین الاقوامی