سیشن کورٹ نے 15 سال تک چالان پیش نہ کرنے پر ایس ایچ او شادباغ کے خلاف مقدمہ درج کرنے کاحکم دے دیا

سیشن کورٹ نے 15 سال تک چالان پیش نہ کرنے پر ایس ایچ او شادباغ کے خلاف مقدمہ درج ...
سیشن کورٹ نے 15 سال تک چالان پیش نہ کرنے پر ایس ایچ او شادباغ کے خلاف مقدمہ درج کرنے کاحکم دے دیا

  

لاہور ( نامہ نگار خصوصی) عدالت نے 15 سال سے اغوا کے مقدمہ کا چالان پیش نہ کرنے پر ایس ایچ او شاد باغ کے خلاف مقدمہ درج کرنے کا حکم دے دیا ،

صاف پانی ایک بہترین منصوبہ ،نااہل لوگوں کی وجہ سے اس میں تاخیر ہوئی:شہباز شریف

ایڈیشنل سیشن جج فیاض احمد بٹر نے رانی بی بی کی درخواست پر سماعت کی، درخواست گزار کے وکیل مدثر چودھری نے عدالت میں موقف اختیار کیا کہ درخواست گزار کے بیٹے کو 2002ءمیں اغوا کیا گیا تھا جس کا مقدمہ شاد باغ تھانہ میں رانی بی بی کی مدعیت میں درج کیا گیا تھا،ایس ایچ او شادباغ 15 سال گزرنے کے باوجود مقدمہ کا چالان پیش نہیں کر رہے ہیں، قانون کے مطابق مقدمہ کا چالان 14 روز میں پیش کرنا لازمی ہے ، ایس ایچ او کی جانب سے چالان پیش نہ کرنے کے باعث مقدمہ التوا کا شکار ہے،ایس ایچ او عدالتی حکم کے باوجود چالان پیش نہیں کر رہے ہیں اور ٹال مٹول کر رہے ہیں، درخواست گزار کے وکیل نے عدالت سے استدعا کی کہ ایس ایچ او کے خلاف قانون کے مطابق کارروائی کی جائے اور ایس ایچ او کو حکم دیا جائے کے وہ مقدمہ کا چالان عدالت میں کریں

مزید :

لاہور -