چیئرمین سینٹ نے طلال چوہدری کی ’کلاس ‘ لے لی ،خاموشی سے سنتے رہے

چیئرمین سینٹ نے طلال چوہدری کی ’کلاس ‘ لے لی ،خاموشی سے سنتے رہے
چیئرمین سینٹ نے طلال چوہدری کی ’کلاس ‘ لے لی ،خاموشی سے سنتے رہے

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )سینیٹ میں غیر معمولی صورتحال اس وقت دیکھنے میں آئی جب چیئرمین سینٹ رضا ربانی کھر نے وفاقی وزیر طلال چوہدری کی ’بولتی ‘ ہی بند کر دی ،ایوان میں ’پن ڈراپ سائلنس‘ ہو گیا اور ہر کوئی بس خاموشی سے چیئرمین کو سنتا رہا ۔

تفصیلات کے مطابق دھرنے کے معاملے پر حکومت کی جانب سے میڈیا چینلز ،فیس بک ٹویٹر دیگر سوشل میڈیا ایپس کو بند کر دیا گیا جس کے باعث شہری ملک کے حالات سے بے خبر رہے اور کسی کو معلوم نہیں تھا کہ اصل میں ملک میں ہو کیا رہاہے تاہم آخر کار زاہد حامد کے استعفیٰ کے بعد ہی حالات معمول پر آنا شروع ہوئے ۔اس صورتحال کے پیش نظر وفاقی وزیر طلال چوہدری سینیٹ میں بیان دینے پہنچے اور اپنی نشست پر کھڑے ہوئے تو چیئرمین سینٹ حکومت کی جانب سے 27گھنٹے تک میڈیا چینلز کو بند رکھنے پر وفاقی وزیر کی شدید ’کلاس ‘ لی اور طلال چوہدری خاموشی سے بس سنتے رہے ۔

سینیٹ کے چیئرمین رضا ربانی نے کہا کہ ”آپ نے 27گھنٹے کیلئے سارے کا سارا میڈیا ہی بند کر دیا ،اتنے شدید حالات تھے کہ آپ نے پارلیمنٹ میں کوئی بیان ہی نہیں دیا ۔اس کے بعد طلال چوہدری نے ’جان کی امان پاتے ہوئے ‘کچھ بولنے کی کوشش کی اور کہنے لگے کہ جناب چیئرمین آپ تھوڑا ٹائم دیں تو میں بات کر لوں اور اگر وہ کہیں تو میں بیان دینے کیلئے تیار ہوں ۔

اس بات کے بعد چیئرمین سینٹ نے طلال چوہدری کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ ’میں آپ کی عزت کرتاہے ،آپ بہت اچھے وزیر ہیں آپ ہر مرتبہ ایوان میں آتے ہیں اور اپنے سوالوں کا جواب دیتے ہیں لیکن یہ اتنا بڑا مسئلہ ہے کہ آپ کے وزیر کو مستعفیٰ ہونا پڑا ،

وزیراعظم اسی روز بیرون ملک چلے جاتے ہیں ،کیا ریاض کی سمٹ زیادہ ضروری ہے یا جو کچھ ملک میں ہو رہاوہ ضروری ہے ،آپ مجھے وہ کرنے کیلئے مجبور کررہے ہیں جو میں کرنا نہیں چاہتا ۔‘

ویڈیو دیکھیں:

مزید :

قومی -