تاریخ میں پہلی مرتبہ شادی کرنے والے جوڑوں کے لئے انتہائی دلچسپ آن لائن سروس متعارف کروادی گئی، اب شادی ہوتے ہی خود بخود حکومت۔۔۔

تاریخ میں پہلی مرتبہ شادی کرنے والے جوڑوں کے لئے انتہائی دلچسپ آن لائن سروس ...
تاریخ میں پہلی مرتبہ شادی کرنے والے جوڑوں کے لئے انتہائی دلچسپ آن لائن سروس متعارف کروادی گئی، اب شادی ہوتے ہی خود بخود حکومت۔۔۔

  

ریاض(مانیٹرنگ ڈیسک)ای کامرس اور ای گورننس جیسے نظریات آج کل ساری دنیا میں مقبول ہورہے ہیں لیکن سعودی عرب نے ایک قدم آگے بڑھاتے ہوئے ’ای شادیاں‘ بھی متعارف کروادی ہیں۔ سعودی گزٹ کے مطابق سعودی وزارت انصاف نے مختلف علاقوں میں 200سے زائد جج تعینات کردئیے ہیں جو شادیوں کی آن لائن رجسٹریشن کریں گے۔ اس مقصد کے لئے نیشنل انفارمیشن سنٹر اور وزارت انصاف باہمی تعاون فراہم کریں گے۔ اس تعاون کے تحت وزارت انصاف کے ڈیٹا بیس کو ابشیر سسٹم اور سوشل سٹیٹس ڈائریکٹوریٹس کے ساتھ منسلک کردیا گیا ہے ، جس کے نتیجے میں شہریوں کا سوشل سٹیٹس و متعلقہ ڈیٹا خودکار طریقے سے آن لائن اپ ڈیٹ ہو جائے گا۔

سعودی عرب کی روبوٹ شہری صوفیہ کا پہلا انٹرویو، پہلی مرتبہ منظر عام پر آتے ہی ایسی بات کہہ دی کہ دنیا میں ہنگامہ برپاہوگیا

اس اقدام کا مقصد شادی کی رجسٹریشن کو روایتی طریقے کی بجائے ڈیجیٹل ڈیٹا کی صورت میں محفوظ کرنا اور تمام متعلقہ شعبوں کو بروقت آن لائن یہ معلومات فراہم کرنا ہے۔ اس کے ذریعے شہریوں کے ریکارڈ کو ایک جگہ پر جمع کرنے میں بھی سہولت ہوگی۔ متعلقہ وزارت یہ یقینی بنانے کے لئے کوشاں ہے کہ شہریوں کو سول سٹیٹس آفس یا عدالت کا رُخ نہ کرنا پڑے۔ معلومات کا درست ریکارڈ تمام متعلقہ شعبوں کے پاس موجود ہونے سے شہریوں کے لئے سہولت ہوگی اور خصوصاً انہیں سوشل سکیورٹی کی سہولیات کی فراہمی آسان ہو جائے گی۔

مزید :

عرب دنیا -