نوجوت سنگھ سدھو اور بھارتی مہمانوں کی آمد پر حضوری باغ میں منعقدہ تقریب ،سینئر صحافی نے پنجاب حکومت کی دھجیاں بکھیر دیں

نوجوت سنگھ سدھو اور بھارتی مہمانوں کی آمد پر حضوری باغ میں منعقدہ تقریب ...
نوجوت سنگھ سدھو اور بھارتی مہمانوں کی آمد پر حضوری باغ میں منعقدہ تقریب ،سینئر صحافی نے پنجاب حکومت کی دھجیاں بکھیر دیں

  

سینئر صحافی اور روزنامہ ’’پاکستان ‘‘ کے گروپ ایڈیٹر کو آرڈی نیشن ایثار رانا نے گذشتہ روز پنجاب حکومت کی جانب سے لاہور کے تاریخی ’’حضوری باغ ‘‘ میں نوجوت سنگھ سدھو  سمیت بھارتی مہمانوں اور کرتار پور راہداری کے تاریخی موقع پر منعقدہ تقریب کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہا ہے کہ ’’کرتارپور بارڈر کی افتتاحی تقریب میں شرکت کیلئے آنے والے بھارتی مہمانوں کے اعزاز میں حضور ی باغ لاہور میں ہونے والی تقریب اس حوالے سے تاریخی تقریب ہے کہ شائد تاریخ میں اس سے پہلے اس سطح پر ہونے والی کوئی تقریب اتنی بے ربط، غیر منظم اور بد مزہ نہیں ہوئی۔ تقریب کے دوران کہیں ایسا محسوس نہیں ہوا کہ جنگ اور بارڈر کی فضا میں پاکستان اور بھارت کے شہریوں کے درمیان امن کا ترانہ گایا جارہا ہے ۔ نہ جانے اس غیر معیاری پروگرام کو کس نے ترتیب دیا۔ ہونا تو یہ چاہئے تھا کہ بھارت سے آئے صحافیوں کو پاکستانی صحافیوں کے ساتھ بیٹھنے کا موقع فراہم کیا جاتا تاکہ وہ اس میں تبادلہ خیال کرتے اور دونوں ممالک کے عوام کے لئے خیر سگالی کے جذبات کا اظہار کرتے۔ ایک دوسرے کے مسائل کو سمجھتے ۔ لیکن ہوا یہ کہ جس کو جہاں موقع ملا بیٹھنے میں عافیت سمجھی ۔بیشک اردو ہماری قومی زبان ہے لیکن یہ تقریب۔۔۔۔

۔۔۔۔ویڈیو دیکھیں۔۔۔

مزید : ویڈیو گیلری