ناروے میں قرآن پاک کی بے حرمتی سے مسلمانوں کے جذ بات مجروح ہوئے، مولانامحمد نیاز

ناروے میں قرآن پاک کی بے حرمتی سے مسلمانوں کے جذ بات مجروح ہوئے، مولانامحمد ...

  



بنوں (بیورورپورٹ) ناروے میں قرآن پاک کی بے حرمتی سے مسلمانوں کے جذبات مجروح ہوئے آزادی اظہار کے نام پر ایسے اقدامات کی اجازت نہیں دی جاسکتی ہے۔لہذا ناروے کے سفیر کو ملک بدر کیا جائے اور ان سے تجارتی و سفارتی تعلقات فوراً ختم کئے کیونکہ یہ سب مسلمانوں کے دل کی آواز ہے۔ان خیالات کا اظہار وحدت اساتذہ تنظیم بنوں کے صدر مولانا محمد نیاز،جنرل سیکرٹری مولانا لطیف الرحمن اور سیکرٹری اطلاعات مولانا عثمان اللہ نے ہنگامی اجلاس سے خطاب کے دوران کہا۔انہوں نے مزید کہا کہ قرآن کریم کی بے حرمتی عالمی امن کیلئے خطرناک ہے کیونکہ ناروے میں قرآن مجید کو نذر آتش کرنے کی کوشش ایک حیران کن اور افسوس ناک عمل ہے۔اب ضرورت اس امر کی ہے کہ ناروے کے سفیر کو ملک بدر کرکے ان سے تجارتی و سفارتی تعلقات معطل جبکہ ان کے مصنوعات کا مکمل بائیکاٹ کیا جائے۔انہوں نے کہا کہ ناروے میں قرآن پاک کی بے حرمتی انتہائی قابل مذمت امر ہے جس سے مسلمانوں کے دل زخمی ہوئے ہیں اور یہ مسلمانوں کیلئے دکھ اور افسوس کی بات ہے۔آخر میں انہوں نے ایک قرار داد کے ذریعے اس دلخراش واقعہ کی پر زور مذمت کی اور ناروے سے تمام تعلقات اور تجارت معطل اور مکمل ختم کرنے کا حکومتی اعلان کیا جائے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر