صوبے میں تیل اور گیس سے اربوں روپے آمدنی متوقع ہے، حمایت اللہ خان 

    صوبے میں تیل اور گیس سے اربوں روپے آمدنی متوقع ہے، حمایت اللہ خان 

  



پشاور(سٹاف رپورٹر)خیبرپختونخوا آئل اینڈ گیس کمپنی دیگر کمپنیوں کے اشتراک سے صوبے میں تیل اور گیس کے چھ مختلف بلاکس پر کام کر رہی ہے جس سے صوبے کو اربوں روپے آمدنی ملنے کا امکان ہے۔ ان خیالات کا اظہار وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا کے مشیر برائے توانائی و برقیات حمایت اللہ خان نے کے پی، او جی سی ڈی ایل کے جائزہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ اجلاس میں سیکرٹری توانائی و برقیات محمد زبیر،ایڈیشنل سیکرٹری افتخار مروت،چیف پلاننگ آفیسر زین اللہ شاہ، سی ای او خیبرپختونخوا آئل اینڈ گیس کمپنی عثمان غنی خٹک، ڈپٹی سیکرٹری زوہیب اور دیگر اعلیٰ حکام نے بھی شرکت کی۔اجلاس میں بتایا گیا کہ خیبرپختونخوا آئل اینڈ گیس کمپنی دیگر کمپنیوں کے ساتھ باراتھئی، پیزو،کلاچی، پہاڑ پور، کرک نارتھ اور پشاور ایسٹ میں تیل اور گیس کے مختلف بلاکس پر کام کر رہی ہے جس سے صوبے کی پیداوار میں اضافے کا امکان ہے مشیرموصوف نے کہا کہ وزیراعظم پاکستان عمران خان کی ہدایات کے مطابق صوبے کے قبائلی اضلاع میں سرمایہ کاری کرنے کی سخت ضرورت ہے جس سے وہاں کی عوام کو روزگار سمیت ترقی کے مختلف مواقع مل سکیں گے اسی طرح توانائی کے شعبے میں بھی کام کرنے کی ضرورت ہے۔ اجلاس میں بتایا گیا کہ کوہاٹ ڈویژن کو گھر گھر گیس فراہمی کے منصوبے کے پہلے فیز پر بہت جلد کام کا آغاز کیا جائے گا  جس کے لئے صوبائی حکومت 694 ملین روپے جاری کر چکی ہے حمایت اللہ خان نے کہا کہ تمام منصوبوں میں میرٹ اور شفافیت کو مدنظر رکھا جائے گا تاکہ قومی فنڈ سے مکمل ہونے والی یہ سکیمیں، عوامی خوشحالی کے لیے موثر اور دیرپا ثابت ہوں۔

مزید : پشاورصفحہ آخر