جے یو آئی کے مفتی کفایت اللہ اور بیٹوں پر حملہ،آہنی راڈ لگنے سے زخمی

جے یو آئی کے مفتی کفایت اللہ اور بیٹوں پر حملہ،آہنی راڈ لگنے سے زخمی

  



اسلام آباد (این این آئی)جمعیت علمائے اسلام (ف) کے رہنما مفتی کفایت اللہ، ان کے دو بیٹے اور ساتھی صبح سویرے مانسہرہ میں بیدرا روڈ کے قریب ایک حملے میں زخمی ہوگئے۔ نامعلوم حملہ آوروں کے خلاف مقدمہ درج کروادیا گیا۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق جے یو آئی (ف) کے رہنما اسلام آباد سے مانسہرہ جارہے تھے جب بیدرا روڈ کے قریب ان کی گاڑی کو روک لیا گیا،حملہ آواروں نے لوہے کے راڈ کیساتھ کار سواروں کو پیٹا جس سے مفتی کفایت اللہ ان کے دو بیٹے شبیر مفتی، حسین مفتی اور ایک ساتھی جان محمد کو شدید زخم آئے اور انہیں فوری طور پر کنگ عبداللہ ٹیچنگ ہسپتال منتقل کیا گیا۔ڈاکٹروں کے مطابق مفتی کفایت اللہ کی کمر اور جسم کے دیگر حصوں پر زخم آئے۔اس حوالے سے مفتی کفایت اللہ کے بھائی حبیب الرحمن نے اس خدشے کا اظہار کیا کہ حملہ آور جے یو آئی کے رہنما اور ان کے بیٹوں کو جان سے نہیں مارنا چاہتے تھے، تاہم یہ ان کے لیے ایک واضح پیغام ہے کہ حملہ آوروں کے خلاف بات کرنا چھوڑ دیں۔

حملہ،زخمی

مزید : صفحہ اول