مستعفی وزیرقانون فروغ نسیم نے ایک اورعہدہ بھی چھوڑدیا

مستعفی وزیرقانون فروغ نسیم نے ایک اورعہدہ بھی چھوڑدیا
مستعفی وزیرقانون فروغ نسیم نے ایک اورعہدہ بھی چھوڑدیا

  



اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)سابق وزیرقانون فروغ نسیم نے پاکستان بارکونسل کی نشست سے استعفیٰ دے دیاجس کی وجہ سے پاکستان بار کونسل سندھ کی سیٹ خالی ہوگئی۔پاکستان بار کونسل نے ان کی جگہ یاسین آزاد ایڈووکیٹ کا تقرر بھی کردیاہے۔

نجی ٹی وی اے آروائی کے مطابق مستعفی وزیر قانون فروغ نسیم نے پاکستان بار کونسل میں اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دیا ہے۔ان کے استعفے سے پاکستان بار کونسل سندھ کی ایک نشست خالی ہوگئی جس پر یاسین آزاد ایڈووکیٹ کا تقرر کردیا گیا۔اٹارنی جنرل نے فروغ نسیم کے استعفے اور یاسین آزاد کی تقرری کے نوٹی فکیشن جاری کردیئے ہیں۔

یاد رہے فروغ نسیم نے ایک ایسے وقت میں استعفیٰ دیا ہے جب وہ سپریم کورٹ میں آرمی چیف کی مدت ملازمت میں توسیع سے متعلق انتہائی اہم نوعیت کے کیس میں بطور وکیل پیش ہوئے۔ان کے بطور وکیل پیش ہونے پر پاکستان بار کونسل نے اعتراضات اٹھائے تھے کیونکہ فروغ نسیم کا لائسنس بحال نہیں ہوا تھا۔تاہم فروغ نسیم نے آج صبح بار کونسل کواپنے لائسنس کی بحالی کی درخواست دی جس پر ان کا لائسنس بحال کردیاگیا اور وہ سماعت کیلئے عدالت پیش ہوئے۔اورسپریم کورٹ کی جانب سے فیصلہ محفوظ کئے جانے کے تھوڑی ہی دیر بعد بارکونسل کی رکنیت سے استعفیٰ دے دیا۔

مزید : قومی