قیمتوں پر کنٹرول کیلئے حکومتی احکامات پر سختی سے عملدرآمد کرایا جائے ‘بلال یاسین

قیمتوں پر کنٹرول کیلئے حکومتی احکامات پر سختی سے عملدرآمد کرایا جائے ‘بلال ...

  

لاہور( کامرس رپورٹر)صوبائی وزیر خوراک و چیئرمین کابینہ پرائس کنٹرول کمیٹی بلال یاسین نے کہا ہے کہ اشیائے صرف کی قیمتوں پر کنٹرول کے حوالے سے حکومتی احکامات پر سختی سے عملدرآمد کرایا جائے اس سلسلے میں صوبہ بھر میں ضلعی انتظامیہ خوردونوش اشیاءکی قیمتوں میں کمی کو یقینی بنائے تا کہ عوام کو ریلیف ملے - یہ بات انہوںنے دربارہال سول سیکرٹریٹ میں کابینہ پرائس کنٹرول کمیٹی کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہی - اجلاس میں ممبرز صوبائی اسمبلی ، سیکرٹریز زراعت، خوراک، انڈسٹریز ، صحت اور انفارمیشن کے علاوہ ڈی جی پنجاب فوڈ اتھارٹی بھی موجود تھے-اجلاس میں عوام کو اشیاءضروریہ کی فراہمی اور مہنگائی پر کنٹرول کے حوالے سے کئے جانے والے حکومتی اقدامات پر تفصیلی غور کیا گیا - سیکرٹری انڈسٹریز نے اجلاس کو بتایا کہ آلو کی نئی فصل آنے سے آلو کی قیمت میں واضح کمی آئی ہے۔

 جبکہ پیاز اور ٹماٹر کی قیمتوں میں بھی کمی واقع ہو رہی ہے - سیکرٹری خوراک نے بتایا کہ ضلعی سطح پر چینی کی قیمت 57 روپے فی کلو فروخت کو ممکن بنانے کے لئے مجسٹریٹس کو متحرک کیا گیا ہے جبکہ دودھ ، روٹی اور نان کی مقررکردہ قیمتوں پر فروخت پر عملدرآمد کرایا جا رہا ہے -صوبائی وزیر کو بتایا گیا کہ ملتان اور اوکاڑہ میں رمضان پیکج کے تحت بچ جانے والی چینی کی فروخت سے چینی کے نرخ میں مزید کمی آئے گی جس سے صارفین کو چینی 47 روپے فی کلو چینی دستیاب ہو گی -اس موقع پر صوبائی وزیر نے اضلاع میں سہولت بازاروں اور اتوار بازاروں کے حوالے سے ہدایات دیتے ہوئے کہا کہ ڈی سی اوز اپنے اپنے اضلاع میں قائم سہولت اور اتوار بازاروں کا روزانہ کی بنیاد پر صبح کی بجائے دوپہر کو وزٹ کریں تا کہ قیمتوں کے کنٹرول پر مسلسل نگرانی کا عمل جاری رہے - انہوںنے کہا کہ اشیاءضروریہ کے نرخ دوپہر کے بعد ریوائز کئے جائیں اور اس ضمن میں کوالٹی پر کسی قسم کا کمپرومائز نہ کیا جائے - صوبائی وزیر نے کہا کہ اس وقت 9 لاکھ میٹرک ٹن چینی سٹاک میں موجود ہے جبکہ اگلے ماہ کرشنگ سیزن بھی شروع ہونے والا ہے اس صورت میں کم سے کم قیمت پر چینی کی فروخت کو ممکن بنایا جائے -

مزید :

کامرس -