شاعر، ادیب،دانشور بابائے لاہور اکبر لاہوری کی 38 ویں برسی کی تقریب

شاعر، ادیب،دانشور بابائے لاہور اکبر لاہوری کی 38 ویں برسی کی تقریب
 شاعر، ادیب،دانشور بابائے لاہور اکبر لاہوری کی 38 ویں برسی کی تقریب
کیپشن: 1

  

لاہور(فلم رپورٹر)پنجابی اُردو زبان کے مشہور شاعر، ادیب، اُستاد، قانون دان، نقاد، کالم نگار، دانشور بابائے لاہور جناب اکبر لاہوری کی 38 ویں برسی پنجاب انسٹیٹیوٹ آف لینگوئج آرٹ اینڈ کلچر لاہور اور اکبر لاہوری فاو¿نڈیشن کے اشتراک سے پنجابی آڈیٹوریم، پنجابی کمپلیکس میںمنائی گئی جس میں پنجاب کے نامور شعرا اور ادیبوں نے شرکت کی صدارت نامور کالم نگار شاعر جناب منّو بھائی نے کی جبکہ مہمان خصوصی نامور افسانہ نگار، کالم نگار شاعرہ محترمہ بشریٰ رحمن، پرنسپل اورئینٹل کالج پنجاب یونیورسٹی کے پرنسپل جناب پروفیسر ڈاکٹر عصمت اللہ زاہد نامور شاعر کمپیئر اعزاز احمد آذر اور پروفیسر ڈاکٹر محمد یونس احقر تھے۔ کمپیئرنگ کے فرائض سنبھالتے ہوئی تقریب کی شروعات ڈائریکٹر پلاک ڈاکٹر صغرا صدف نے کی۔ تقریب کے آغاز میں تلاوتِ قرآن پاک شفیق الرحمن نے کی اور نعتِ رسول اکرم کا نذرانہ شاہد احمد قادری نے پیش کیا جبکہ مضامین ڈاکٹر ارشد اقبال ارشد، پروفیسر رمضان شاہد، خاقان حیدر غازی، نیاز حسین لکھویرا ریڈیو پاکستان کے کمپیئر خالد بھٹی اور حمید اکبر لاہوری نے پڑھے منظوم خراج تحسین پیش کرنے والوں میں علامہ فقیر اثر انصاری، عدل منہاس لاہوری، بیرا جی، ہمایوں پرویز شاہد، ہجویری بھٹی، اسلم شوق، فرید لاہوری اور سردار ارشد ڈوگر تھے۔ تقریب میں اکبر لاہوری پر کئے گئے کام کے حوالے سے اکبر ایوارڈ پانچ شخصیات کو دئیے گئے جن میں مشہور گلوکار پرویز مہدی، ناصر زیدی، ڈاکٹر فاخرہ اعجاز، عفت ستار اور صاحبزادہ ڈاکٹر شبیر کمال عباسی کے نام شامل ہیں۔

مزید :

کلچر -