جوہر ٹاؤن پولیس گزشتہ روز قتل ہونیوالے طالب علم کے قاتلوں کو گرفتار نہ کر سکی

جوہر ٹاؤن پولیس گزشتہ روز قتل ہونیوالے طالب علم کے قاتلوں کو گرفتار نہ کر سکی


لاہور(کرائم سیل) پولیس گزشتہ روز قتل ہونیوالے طالب علم کے قاتلوں کو گرفتار نہ کر سکی ۔روایتی طریقہ تفتیش اور سست روی نے ملزموں کو محفوظ مقام پر پہنچا دیا۔بتایا گیا ہے کہ تھانہ جوہر ٹاؤن سے ملنے والی طالب علم کی لاش کے متعلق پولیس کی تفتیش نامعلوم افراد کے ہاتھوں قتل سے آگے نہ بڑھ سکی پولیس کے مطابق طالب علم 23سالہ فرحان مقامی یونیورسٹی میں فائنل ائیر کا سٹوڈینٹ تھا اور خانیوال کا رہائشی تھا تفتیشی افسران کے مطابق معاملہ سنگین نوعیت کا ہے تاہم شبہ ہے کہ فرحان کے قتل کی وجہ لڑکی کا چکر ہو سکتاہے کیونکہ وجہ قتل ڈکیتی معلوم نہیں ہو تا جس سفاکانہ طریقہ سے فرحان کی شہہ رگ کاٹی گئی ہے اس میں دشمنی کا عنصر نمایاں ہے تاہم جلد ملزمان کو گرفتا کر لیا جائے گا ۔

جس کے لئے فرحان کی یونیورسٹی کے ساتھیوں اور استاتذہ سے بھی تفتیش جاری ہے پولیس نے فرحان کے والد کی مدعیت میں نامعلوم افراد کے خلاف مقدمہ درج کر لیاہے۔

مزید : علاقائی