بر طانیہ کے ظالم ترین شوہر کا خوبصورت بیوی کے ساتھ انسانیت سوز سلوک

بر طانیہ کے ظالم ترین شوہر کا خوبصورت بیوی کے ساتھ انسانیت سوز سلوک
بر طانیہ کے ظالم ترین شوہر کا خوبصورت بیوی کے ساتھ انسانیت سوز سلوک

  


لندن (نیوز ڈیسک)ذرا تصور کیجئے کہ آپ کو ایک طلاق کے مقدمے کا سامنا ہے آپ اپنی دو سالہ بیٹی کے ہمراہ اپنے شوہر سے مالی سیٹلمنٹ کی کوششیں کر رہی ہیں اور سالہا سال کے ظلم و تشدد کے بعد آپ کے گھر سے نکال دیا گیا ہے۔ اس مقدمے پر ایک فیملی جج پہلے ہی ڈگری صادر کر چکا ہے تو واضح ہو کہ اب قانونی رشتہ اپنے اختتام کو پہنچنے والا ہے اور آپ کا سابق شوہر آپ پر ایک اور بم گرا دے وہ یہ کہ آپ کے شوہر کا وکیل عدالت میں ایک دستاویز جمع کروائے جس سے ثابت ہوتا ہو کہ آپ کے شوہر نے آپ سے پہلے بھی بنگلہ دیش میں ایک عورت سے شادی کر رکھی ہے۔ آپ اس کی بیوی نہیں تو آپ کو کیسا لگے گا؟ لہٰذا اب وہ آپ سے یہ چاہتا ہے کہ اگر طلاق لینی ہے تو پہلے آپ کو اس کے تمام اثاثوں پر ہر قسم کا دعویٰ واپس لینا ہوگا۔ یہ قصہ ہے ایک کاروباری عورت لارا لے اون کا جس نے فاروق نامی شخص سے شادی کی تھی۔ بہر حال تمام دستاویزات سے فاروق علی پر دوہری شادی کا الزام عائد ہوتا ہے اور اسے مجرم گردان کر عدالت نے پچھلے ہفتے سزا سنا دی ہے لیکن پولیس اور ڈومیسٹک وائلنس ایجنسی نے شبہ ظاہر کیا ہے کہ 29 سالہ لارا کو اپنے شوہر کی طرف سے ابھی مزید تشدد کا خطرہ ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس