فیفا کے صدر سیپ بلیٹر کے خلاف مجرمانہ تفتیش کا آغاز

فیفا کے صدر سیپ بلیٹر کے خلاف مجرمانہ تفتیش کا آغاز

  



نیویارک(نیٹ نیوز) فٹ بال کی عالمی تنظیم فیفا کے صدر سیپ بلیٹر کے خلاف مجرمانہ تفتیش کا آغاز کردیا گیا۔حاصل ہونے والی معلومات کے مطابق سوئٹزر لینڈ کے پروسیکیوٹرز نے سیپ بلیٹر کے خلاف مجرمانہ الزامات پر کارروائی کا آغاز کردیا ۔ تحقیقات مجرمانہ بد انتظامی کے شبہ پر کی جا رہی ہے۔ فیفا کے مطابق وہ سوئس اٹارنی جنرل سے تعاون کر رہا ہے۔ ذرا ئع کے مطابق تحقیقات کا دائرہ ٹی وی کے حقوق کا ایک معاہدہ ہے جو سیپ بلیٹر نے کریبیائی فٹ بال کے سربراہ جیک وارنر کے ساتھ 2005 میں کیا تھا۔ سیپ بلیٹر پر اس بات کا بھی شک ہے کہ انھوں نے2011 میں یوای ایف اے کے صدر مائیکل پلیٹینی کو ایک قوائد سے ہٹ کر رقم دی تھی۔

79 سالہ بلیٹر 29 مئی کو پانچویں مرتبہ فیفا کا صدارتی انتخاب جیتا تھا تاہم بعد میں کرپشن کے دعوؤں کی وجہ سے 2 جون کو اپنا عہدہ چھوڑنے کا اعلان کیا تھا۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی


loading...