فلسطین کی آزادی کیلئے پہلے سے زیادہ جدوجہد کی ضرورت ہے، خلیل الحیہ

فلسطین کی آزادی کیلئے پہلے سے زیادہ جدوجہد کی ضرورت ہے، خلیل الحیہ

  



غزہ (این این آئی) حماس کی پولٹ بیورو کے رکن خلیل الحیہ نے فلسطینیوں پر زور دیا ہے کہ فلسطین پر اسرائیلی قبضہ ختم کرانے کیلئے آج پہلے سے زیادہ اور مشترکہ جدوجہد کی ضرورت ہے۔ غزہ کے مرکزی علاقے میں عیدالاضحی کا خطبہ دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ تمام فلسطینی متحد ہو جائیں اور بیت المقدس کی اسرائیلی قبضہ سے آزادی کیلئے اٹھ کھڑے ہوں۔ انہوں نے کہا کہ آج ہم ایسے دوراہے پر آ گئے ہیں جہاں ہم نے اگر پہلے سے زیادہ متحد ہو کر اسرائیلی قبضہ کے خاتمے کیلئے جدوجہد نہ کی تو ہمیں اپنی کاذ، اصولوں اور مسجد اقصی سے دستبردار ہونا پڑیگا۔ انہوں نے فلسطینی عوام کے فیصلہ سازی کے اختیار پر نام نہاد فلسطینی اتھارٹی کے خود ساختہ قبضے پر شدید تنقید کی اور کہا کہ مٹھی بھر ظالموں نے نہ صرف فلسطینیوں بلکہ دنیا بھر کے مسلمانوں کو اپنے شکنجہ میں کس رکھا ہے۔ انہوں نے کہا کہ کیا مسجد اقصی کی بے حرمتی، نمازیوں پر تشدد، بچوں کے قتل اور عبادت کرنے پر پابندی سے بڑا کوئی ظلم ہوسکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ دنیا کیوں غزہ کے لوگوں کو ادویات، غذا اور بجلی سے محروم کرنے اور یہاں کے درختوں اور پانی کے ذخائر کی تباہی پر خاموش ہے؟۔

فلسطینی قیدیوں سے اظہار یکجہتی کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ ان کی آزادی اور ان کا مقصد حماس اور تمام فلسطینیوں کا نصب العین ہے جس کے لیے جدوجہد ہر حال میں جاری رکھی جائے گی۔

مزید : عالمی منظر


loading...