بانجھ پن کے علاج کیلئے دنیا بھر میں اپنائے جانے والے عجیب وغریب طریقے

بانجھ پن کے علاج کیلئے دنیا بھر میں اپنائے جانے والے عجیب وغریب طریقے
بانجھ پن کے علاج کیلئے دنیا بھر میں اپنائے جانے والے عجیب وغریب طریقے

  



برمنگھم (نیوز ڈیسک) جنسی اور تولیدی صحت میں اضافے اور بانجھ پن کے خاتمے کے لئے آج کے دور میں طرح طرح کی ادویات استعمال کی جاتی ہیں لیکن ماضی کا انسان اس مقصد کے لئے عجیب و غریب اور ناقابل یقین حربے بھی استعمال کرتا رہا ہے، جن میں سے اکثر کا استعمال آج بھی جاری ہے۔ ان دلچسپ نسخوں کا احوال کچھ یوں ہے۔

-1 بن مانس کا پیشاب

زمبابوے کے بعض قبائل بن مانس کے پیشاب کو جنسی ہارمونز سے بھرپور سمجھتے ہیں اور بانجھ پن کے خاتمے کے لئے اسے شراب کے ساتھ ملا کر پیتے ہیں۔

-2 مکھی کا جوس

ہسپانوی مکھی جسے بلسٹر بیٹل بھی کہا جاتا ہے کا جوس جنسی صحت کے لئے مفید سمجھا جاتا ہے اور ہسپانیہ میں اس کا استعمال عام رہا ہے۔

-3 گھونسلے کا سوپ

چین اور دیگر کئی ایشیائی ممالک میں پرندوں کے گھونسلوں کو پانی میں ابال کر اس کا سوپ پیا جاتا ہے تاکہ جنسی صحت میں اضافہ کیا جاسکے۔ یہ گھونسلے پہاڑوں میں رہنے والے چھوٹے پرندے اپنے لعاب کو خشک کرکے بناتے ہیں۔

-4 لنگم پوجا

جاپان اور بھارت میں عضو کے دیو قامت بت بنا کر ان کی پوجا کی جاتی ہے اور گلیوں بازاروں میں ان کی نمائش کی جاتی ہے۔ اس عمل کو حصول اولاد کا ذریعہ سمجھا جاتا ہے۔

-5 پانی کا چھڑکاﺅ

ہنگری میں ایک سالانہ تہوار میں نوجوان لڑکے لڑکیاں بازاروں میں نکلتے ہیں اور لڑکیوں پر پانی پھینکا جاتا ہے۔ یہاں لوگوں کا خیال ہے کہ پانی کے چھڑکاﺅ سے لڑکیوں کی صفائی ہوجاتی ہے اور وہ اولاد پیدا کرنے کی صلاحیت سے مالا مال ہوجاتی ہیں۔

-6 اشک بار ستون

ترکی میں اولاد کے خواہشمند آنسو بہانے والے ایک ستون کے ایک سوراخ میں انگوٹھا ڈال کر گھماتے ہیں۔ اگر انگوٹھا تر ہوجائے تو سمجھا جاتا ہے کہ سائل جنسی اور تولیدی صحت سے مالا مال ہوگیا۔

مزید : تعلیم و صحت


loading...