مقبوضہ کشمیرمیں صحافیوں کے ہسپتالوں میں داخلے پر پابندی عائد

مقبوضہ کشمیرمیں صحافیوں کے ہسپتالوں میں داخلے پر پابندی عائد

  

سرینگر(کے پی آئی )مقبوضہ کشمیرم یں بیماروں کی صحت یابی اور شفاخانوں کے کام کاج کو یقینی بنانے کیلئے پرنسپل اینڈ ڈئن گورنمنٹ میڈیکل کالج سرینگر نے تمام سرکاری اسپتالوں کے عہدیداروں کو ہدایت کی کہ اسپتال وارڈوں میں راو نڈ اور بھیڑ بھاڑ کے دوران صحافیوں اور اخباری نمائندوں کے وارڈوں میں داخل ہونے پر پابندی عائد کی جائے۔ پرنسپل اینڈ ڈئن گورنمنٹ میڈیکل کالج سرینگر نے تمام اسپتالوں کے ذمہ داروں کو تحریری طور پر اس بات سے آگاہ کیا کہ بیماروں کی صحت یابی اور اسپتالوں کی کارکردگی کو بہتر بنانے کیلئے وارڈوں میں ڈاکٹروں کے راو نڈ اور مختلف تشدد آمیز واقعات رونما ہونے کے دوران صحافیوں اور اخباروں کے نمائندوں کی اسپتالوں اور وارڈوں میں آنے پر پابندی عائد کی جائے۔

انہوں نے کہا کہ اکثر و بیشترصحافی اور خبر رساں اداروں کے نمائندے بغیر کسی اجازت کے اسپتال کے وارڈوں اور حساس جگہوں پر گھس کر ڈاکٹروں اور نیم طبی عملے کی خدمات کو متاثر کر رہے ہیں جس کی وجہ سے اکثر و بیشتر بیمار بھی متاثر ہوتے ہیں۔ انہوں نے اپنے حکمنامے میں سرکاری اسپتالوں کے ذمہ داروں کو اس بات سے بھی آگاہ کیا کہ صحافی اور نمائندے بغیر کسی اجازت کے اسپتالوں میں بیماروں سے پوچھ تاچھ کرتے ہیں جو ایک ناقابل برداشت عمل ہے اور اس طرح کی کارروائیاں عمل میں لانے سے نہ صرف بیمار حراساں ہو رہے ہیں بلکہ اسپتالوں کا کام کاج بھی متاثر ہو رہا ہے۔ اپنے حکمنامے میں سرکاری اسپتالوں کے تمام ذمہ داروں کو ہدایت کی کہ صحافیوں اور نمائندوں کو فرصت کے لمحات میں ہی بیماروں اور انتظامیہ کے ساتھ ملنے کی اجازت دے دی جائے

مزید :

عالمی منظر -