کرشنگ سیزن سر پر آنے کے باوجود گنے کا فی من ریٹ مقرر نہ کرنے پر اظہار برہمی

کرشنگ سیزن سر پر آنے کے باوجود گنے کا فی من ریٹ مقرر نہ کرنے پر اظہار برہمی

پشاور( سٹی رپورٹر)اصحاب بابا زرعی ٹاؤن ٹو پشاور کے ناظم فریداللہ خان کافورڈھیری نے شوگر ملز مالکان اور کین کمشنر کی جانب گنے کے کرشنگ سیزن سر پر آنے کے باوجود گنے کا فی من ریٹ مقرر نہ کرنے پر اظہار برہمی کرتے ہوئے وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان اور وزیرخوراک قلندر لودھی کی زیر صدارت گنے کے ریٹ فکس کرنے کے لئے خصوصی اجلاس منعقد کرنے کا مطالبہ کیاہے۔ ٹاؤن ٹو پشاور کے دفتر میں ٹاؤن ٹو کے دیہات سے آئے وفد سے بات چیت کرتے ہوئے فریداللہ خان کافورڈھیری نے کہاکہ پچھلے سال بھی شوگر ملز مالکان اور کین کمشنر کی مشاورت سے فی 140 کلو گرام گنے کا ریٹ 180 روپے مقرر کیا تھا لیکن بعد میں شوگر ملز مالکان نے ادائیگی 140 روپے کے حساب کردی جس پر ملز مالکان اور زمینداروں کے درمیان تنازعہ پیدا ہوگیاہے اور زمینداروں کو دیوار سے لگایا لیکن اس دفعہ ایسا نہیں ہونے دینگے اور گنے کے ریٹ بروقت مقرر کرکے10 نومبر سے کرشنگ سیزن شروع کیا جائے تاکہ زمینداروں کو گندم کی کاشت کے لئے زمین مہیا مل سکیں۔ انہوں نے وزیراعلیٰ سے زمینداروں سے خصوصی اجلاس منعقد کرنے کا مطالبہ کیاہے کیونکہ سوئی گیس اور بجلی مہنگا ہونے سے زمینداروں کو کاسٹ آف پراڈکشن پوری کرنا مشکل ہوگیاہیں۔

مزید : پشاورصفحہ آخر