’میں نے مرچوں والا کھانا کھانے کے مقابلے میں حصہ لیا تو 4 دن تک جسم کے اس حصے سے خون نکلتا رہا اور پھر۔۔۔‘ نوجوان لڑکی نے ایسی بات کہہ دی کہ آپ کو بھی ہنسی آجائے

’میں نے مرچوں والا کھانا کھانے کے مقابلے میں حصہ لیا تو 4 دن تک جسم کے اس حصے ...
’میں نے مرچوں والا کھانا کھانے کے مقابلے میں حصہ لیا تو 4 دن تک جسم کے اس حصے سے خون نکلتا رہا اور پھر۔۔۔‘ نوجوان لڑکی نے ایسی بات کہہ دی کہ آپ کو بھی ہنسی آجائے

  

مانچسٹر(نیوز ڈیسک) مرچ مسالے والے کھانوں کا اپنا ہی مزہ ہے۔بھلا یہ کیسے ممکن ہے کہ ہم ان سے ہاتھ روک سکیں، مگر جناب احتیاط ضروری ہے! زبان کا ذائقہ اپنی جگہ مگر زیادہ مرچ مسالہ انسان کا وہ حال کر دیتا ہے کہ کسی کو دکھانا تو دور کی بات آپ کسی کو بتا بھی نہیں سکتے۔

برطانوی لڑکی شانن گولڈنگ اس معاملے میں بہت اچھی مثال ہے، بلکہ اب تو وہ عبرت کا نشان بن گئی ہے۔ چند روز قبل شانن کے سر پر نجانے کیا بھوت سوار ہوا کہ اُس نے ’سامیانگ ہاٹ چکن فلیور کپ رامین چیلنج‘ قبول کرنے کی ٹھان لی۔ یہ جاپان سے شروع ہونے والا ایک چیلنج ہے جس میں انتہائی تیز مرچ مسالے والی نوڈلز کا ایک پیالہ کھانا ہوتا ہے۔ شانن نے چیلنج قبول تو کر لیا مگر مکمل نہیں کر پائی، پھر بھی ایسی سزا ملی کہ ساری عمر یاد رکھے گی۔

ہوا کچھ یوں کہ شانن نے آدھے سے زیادہ سپائسی نوڈلز کھائے اور اس کی ہمت جواب دے گئی۔ جلد ہی اُس کے پیٹ میں شدید درد شروع ہو گیا۔ رات بھر تو وہ درد میں مبتلاء رہی لیکن اگلی صبح رفع حاجت کے لئے ٹوائلٹ گئی تو جسم سے پاخانے کی جگہ خون خارج ہونے لگا۔ تب اُسے احساس ہوا کہ یہ معاملہ تو بہت ہی خطرناک ہو چکا ہے۔

شانن فوری طور پر ہسپتال چلی گئی، جہاں چار روز کے علاج کے بعد اس کے جسم سے خون خارج ہونا بند ہوا۔ ڈاکٹروں کا کہنا تھا کہ جس طرح بعض اوقات انسان کی ناک سے خون خارج ہونے لگتا ہے اسی طرح حد سے زیادہ مرچ مسالے کے استعمال کی وجہ سے آنتوں سے بھی خون کا اخراج شروع ہو جاتا ہے۔ یہ خون وقفے وقفے سے جاری رہتا ہے اور بروقت علاج نہ ہو تو صورتحال بہت پیچیدہ بھی ہو سکتی ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس